”چرس“ نے روس اور وکی پیڈیا میں لڑائی کرا دی

”چرس“ نے روس اور وکی پیڈیا میں لڑائی کرا دی
”چرس“ نے روس اور وکی پیڈیا میں لڑائی کرا دی

  

ماسکو (نیوز ڈیسک) سیاسی اور مذہبی وجوہات کی بناءپر مشہور سوشل میڈیا ویب سائٹوں کو مختلف ممالک میں پابندیوں کا سامنا رہتا ہے لیکن روس نے ’چرس‘ کا ذکر کرنے پر وکی پیڈیا ویب سائٹ کے خلاف محاذ کھول دیا ہے اور اسے حکم دیا ہے کہ یا تو چرس کے ذکر والا پیج ڈیلیٹ کردیا جائے یا پھر روس میں وکی پیڈیا پر مکمل پابندی کا سامنا کیا جائے۔

اس جنگ کا آغاز جنوبی روس کے گاﺅں چیورنی یارکے ایک سرکاری پراسیکیوٹر نے کیا ہے۔ پراسیکیوٹر کا موقف تھا کہ وکی پیڈیا چرس کا پیج ڈیلیٹ کرے اور عدالت نے بھی اس کے موقف کو جائز قرار دے دیا۔ وکی پیڈیا کا پیج چرس کے بارے میں کہتا ہے ”چرس Cannabis کی حشیش شکل ہے جسے بھارت، لبنان، پاکستان، نیپال اور جمیکا جیسے ممالک میں ہاتھ سے تیار کیا جاتا ہے۔“

چیورنی یار گاﺅں کے با سیوں نے عدالت سے استدعا کی کہ چرس کے متعلق وکی پیڈیا کے روسی زبان میں پیج کو ڈیلیٹ کردیا جائے۔ روس میں اس سے پہلے بھی نشہ آور اشیاءاور دیگر قابل اعتراض مواد کے بارے معلومات کو بچوں سے دور رکھنے کے لئے اس طرح کی پابندیوں کا مطالبہ کیا جاتا رہا ہے۔

ضرور پڑھیں: اسد عمر کی چھٹی

چونکہ انفرادی پیجز پر پابندی لگانا مشکل ہے لہٰذا اب روس میں وکی پیڈیا پر مجموعی طور پر پابندی لگانے کا معاملہ زیر غور ہے۔ دریں اثناءچرس کے متعلق پیج کی شہرت بہت پھیل گئی ہے اور اسے روزانہ 20 سے 40کی بجائے تقریباً 2 لاکھ مرتبہ وزٹ کیاجارہا ہے، اور لوگوں کا کہنا ہے کہ حکام نے چرس کے بارے شور بلند کر کے اس پیج کو اور مشہور کر دیا ہے اور لوگ مزید تیزی سے اس کی طرف مائل ہو رہے ہیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس