چیئرمین اوگرا کو نیب کی طرفسے فرار کرانے کی رپورٹ لمحہ فکریہ ہے،خرم نواز گنڈا پور

چیئرمین اوگرا کو نیب کی طرفسے فرار کرانے کی رپورٹ لمحہ فکریہ ہے،خرم نواز ...

لاہور(نمائندہ خصوصی) عوامی تحریک کے سیکرٹری جنرل خرم نواز گنڈاپور نے کہا ہے کہ 82ارب روپے کی کرپشن میں ملوث سابق چیئرمین اوگرا کو نیب کی طرف سے فرار کروانے کی رپورٹ لمحہ فکریہ ہے کرپشن روکنے کے ذمہ دار ادارے کرپشن کوفروغ دے رہے ہیں اورپولیس بے گناہوں کی جانیں لے رہی ہے اس سب کے باوجود مجرمانہ ذہنیت رکھنے والے مقتدر طبقات اس ظالم نظام اور اس کرپٹ جمہوریت کو مضبوط کرنے پر بضد ہیں وہ گزشتہ روز پاکستان عوامی تحریک کی دستور کمیٹی کے اجلاس کے بعد اخبار نویسوں اور کمیٹی کے ممبران سے بات چیت کررہے تھے اجلاس میں دستور پر نظرثانی کیلئے قائم کمیٹی کے ممبران میجر(ر) محمد سعید، قاضی فیض الاسلام، محمد انوار ایڈووکیٹ، ساجد بھٹی، ایم نوراللہ نے شرکت کی۔ خرم نواز گنڈاپور نے کہا کہ پولیس کا بنیادی فرض عوام کے جان و مال کا تحفظ ہے مگر اس پولیس نے 17 جون 2014 کے دن ماڈل ٹاؤن میں خون کی ہولی کھیلی اور 14 بے گناہ شہریوں کو خون میں نہا دیا اور 85 سے زائد کو چھلنی کر دیا۔ یہ سارا ظلم پنجاب کے وزیراعلیٰ اور وزیراعظم کی ناک کے نیچے ہوا مگر آج تک اس سانحہ کے ملزمان کو کوئی سزا نہیں ملی بلکہ اس کی غیر جانبدار تفتیش کا بھی آغاز نہ ہو سکا۔ انہوں نے کہا کہ قاتلوں، ظالموں،کرپٹ عناصر کے سرپرستوں کو عبرتناک سزائیں دینے کیلئے انقلاب کی اہمیت پہلے سے بڑھ گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ 82ارب روپے کی کرپشن کے ملزم کو فرار کروانے میں نیب ملزم ہے اور یہ رپورٹ سپریم کورٹ میں بھی پیش ہو چکی ہے۔ ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ کرپشن کے ملزم کو فرار کروانے والوں کو گرفتار کر کے ان کے مقدمات فوجی عدالت میں چلائے جائیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1