بھارت اور افغانستان کے گٹھ جوڑ سے ملک میں انتشار پیداہوا ، ساجد میر

بھارت اور افغانستان کے گٹھ جوڑ سے ملک میں انتشار پیداہوا ، ساجد میر

لاہور (نمائندہ خصوصی) مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان کے سربراہ سینیٹر پروفیسر ساجد میر نے یوم دفاع کے موقع پر اسلام آباد کے دینی مدارس کی بندش کے فیصلے کی مذمت کی ہے۔ جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے ان کاکہنا تھا،دینی مدارس کو دیوار سے لگایا جارہا ہے جس سے دنیا کو غلط پیغام جارہا ہے۔اس اقدام سے سیکورٹی اداروں کی نااہلی عیا ں ہوتی ہے۔ دہشت گردی کے بعض واقعات میں یونیورسٹیوں کے طلبہ بھی ملوث پائے گئے ہیں تو کیا پھر کل کو ہر ایسے موقع پر انہیں بھی بند کردیا جائے گا۔تعلیمی اداروں کی بندش مسائل کا حل نہیں، بھارت اور افغانستان کے گٹھ جوڑ سے ملک میں انتشار ہے جنہیں امریکہ اور اسرائیل کی مدد حاصل ہے۔ دہشت گردوں کے ان سرپرستوں کے ہاتھ تلاش کرکے توڑیں جائیں۔ اگر کوئی دینی مدرسہ بھی ملوث نکلے اس کے خلاف بھی ایکشن لیا جائے۔ مگر سب کو ایک ہی لاٹھی سے مت ہانکا جائے۔انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کے خاتمے کے لیے تمام دینی جماعتیں حکومت کے ساتھ کھڑی ہیں ۔ ملک میں قیام امن، سلامتی واستحکام کی ہم سب کی ذمہ داری ہے۔

مزید : صفحہ آخر