حکومت کی جاری پالیسیوں سے زراعت اور ٹیکسٹائل انڈسٹری تباہ ہو جائیگی، ایس ایم تنویر

حکومت کی جاری پالیسیوں سے زراعت اور ٹیکسٹائل انڈسٹری تباہ ہو جائیگی، ایس ایم ...

لاہور(کامرس رپورٹر) اپٹما کے چےئرمین ایس ایم تنویر نے کہا ہے کہ حکومت کی پالیسیوں سے زراعت اور انڈسٹریز بری طرح متاثر ہو رہی ہے اور اگر حکومت نے اپنی پالیسیوں میں مثبت تبدیلیاں نہ کیں توزراعت اور ٹیکسٹائل انڈسٹری تباہ ہو جائے گی ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز اپٹما ہاؤس میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کی نئی پالیسیوں کے باعث کسانوں کی مشکلات بڑھ گئی ہیں ۔ یوریا کھاد کی قیمت میں اضافہ کہاں کی کسان دوستی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ملکی ترقی کسانوں کو ریلیف دینے میں ہے ۔ بیرون ممالک میں کسانوں کو ڈائریکٹ سبسڈی دی جاتی ہے ۔ ان کو کھاد اور بجلی مفت فراہم کی جاتی ہے جبکہ پاکستان میں آئے روز کھاد کی قیمت میں اضافہ کر دیا جاتا ہے جس کے باعث کسانوں کے لئے پیداواری لاگت بڑھ گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایک جانب بھارت باڈر پر شہریوں پر گولیاں برسا ہے ۔ بھارت ہمارا دوست نہیں ہے وہ پاکستان کا دشمن ہے وہ ہر میدان میں پاکستان کو نقصان دینا چاہتا ہے دوسری جانب ہماری حکومت خود ہی انڈسٹریز اور زراعت کو اپنی غلط پالیسیوں سے نقصان پہنچا رہی ہے ۔

مزید : صفحہ آخر