طاہر القادری کو عدالت میں گھسیٹیں گے ،اگر عمران رائیونڈ مارچ کریں گے تو لوگ بھی انکے گھر جائینگے :پرویز رشید

طاہر القادری کو عدالت میں گھسیٹیں گے ،اگر عمران رائیونڈ مارچ کریں گے تو لوگ ...

اسلام آباد لاہور،(اے پی پی،این این آئی ) وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات و قومی ورثہ سینیٹر پرویز رشید نے طاہر القادری کے الزامات کے خلاف عدالت جانے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ ہم طاہر القادری کو عدالت میں گھسیٹیں گے اور ہر متعلقہ فورم پر ان کے تمام الزامات کا جواب مانگیں گے ، عمران خان صاحب خود شیشے کے گھر میں بیٹھ کردوسروں کو پتھر نہ ماریں ، اگر عمران خان رائیونڈ مارچ کریں گے تو لوگ بھی ان کے گھر جائیں گے ۔طاہرالقادری پاکستان کے عوام کو دو بار دھوکہ دے کر بھاگ چکا ہے اور اب تیسری بار غلیظ الزامات کی سیاست کرنے آیا ہے‘ہم پر الزام تراشی کرنے والاشخص ننگ وطن اورننگ دین ہے، طاہرالقادری نے خود تو کینیڈا کی شہریت اختیار کر رکھی ہے اور کینیڈا کی شہریت رکھنے کا مطلب ہے کہ آپ تاج برطانیہ سے وفاداری کا حلف اٹھاتے ہیں، تاج برطانیہ سے وفاداری کا حلف اٹھانے والا شخص کس منہ سے کسی اور پر الزام لگاتا ہے، اور الزام بھی ایک ایسے شخص پر جنہوں نے دنیا کی بڑی طاقتوں کے دباؤ اور لالچ کو پس پشت ڈالتے ہوئے بھارت کے 5 ایٹمی دھماکوں کے جواب میں 6 ایٹمی دھماکے کیے۔ اتوار کو مختلف نجی ٹی وی چینلز سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ طاہرالقادری پاکستان کے عوام کو دو بار دھوکہ دے کر بھاگ چکا ہے اور اب تیسری بار غلیظ الزامات کی سیاست کرنے آیا ہے، طاہرالقادری دنیا بھر سے مال اکٹھا کر کے پاکستان میں مکروہ کھیل کھیلنے آتا ہے اس لیے ہم ایسے شخص کو کسی صورت میں بھی معاف نہیں کریں گے اور میں خود ذاتی طور پر طاہر القادری کے خلاف عدالت میں جاؤں گا اور اس کے خلاف مقدمہ دائر گروں گا‘ اس نے جو الزامات ہم پر لگائے ہیں ان کو عدالت میں جھوٹا ثابت کرکے پاکستانی عوام کے سامنے اُسے بے نقاب کروں گا، طاہرالقادری نے بھارت کی خوش آمد کر کے وہاں اپنا ادارہ بنایا اور دیگر 90 ملکوں میں بھی ادارے قائم کیے جو شخص بھارت سمیت دنیا کے 90 ممالک میں اپنے ادارے قائم کرتا ہے اور پھر انہیں خوش کرنے کے لیے پاکستان کے خلاف گفتگو کرتا ہے وہ ہم پر الزام تراشی کس منہہ سے کرتا ہے۔ وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ وزیراعظم پر بلاوجہ الزامات لگانے والوں کو یہ بھی پتہ ہونا چاہیے کہ وزیر اعظم محمد نواز شریف نے بھارت کے 5 ایٹمی دھماکوں کے جواب میں 6 ایٹمی دھماکے کیے۔ ایک اور نجی ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ عمران خان کو چاہیے کہ سیاست کو سیاست تک ہی محدود رکھیں اور اسے ذاتیات اور لوگوں کے نجی گھروں تک پہنچانے سے گریز کریں کیونکہ شیشے کے گھر میں بیٹھ کر جب آپ دوسروں کو پتھر ماریں گے یا کیچڑ میں کھڑے ہو کر دوسروں پر کیچڑ پھینکیں گے تو اس کے چھینٹے عمران خان پر بھی آ سکتے ہیں، عمران خان اگر رائیونڈ مارچ کریں گے تو لوگ ان کے گھر جائیں گے، عمران خان کی اپنی جماعت ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہے جس میں لڑائی جھگڑے اور فسادات شروع ہو چکے ہیں، عمران خان دراصل 2018ء کے انتخابات سے خوفزدہ ہیں اور جو نتیجہ 2014ء کے دھرنوں کا ہوا تھا ان تحریکوں کا نتیجہ بھی وہی ہوگا۔

مزید : صفحہ اول