خیبر پختونخوا، لیڈی ریڈنگ ہسپتال میں اربوں کے مالی نقصان کا انکشاف

خیبر پختونخوا، لیڈی ریڈنگ ہسپتال میں اربوں کے مالی نقصان کا انکشاف

  

پشاور (مانیٹرنگ ڈیسک) خیبر پختونخوا میں سب سے بڑے لیڈی ریڈنگ ہسپتال میں اربوں روپے کے مالی نقصان کا انکشاف ہوا ہے ہسپتال کی ڈیپارٹمنٹل اکاؤنٹس کمیٹی نے آڈٹ رپورٹ جاری کردی خیبر پختونخوا کے سب سے بڑے لیڈی ریڈنگ ہسپتال میں کورونا وائرس سے بچاؤ کے لیے سامان کا ریکارڈ نہ ہونے کے بعد ایک اور آڈٹ رپورٹ سامنے آگئی، ڈیپارٹمنٹل اکاؤنٹس کمیٹی نے ہسپتال میں اربوں روپے کے مالی نقصان کی نشاندہی کردی۔آڈٹ رپورٹ کے مطابق ہسپتال میں 4 ارب 5 کروڑ 64 لاکھ روپے سے زائد کا حساب موجود نہیں جبکہ 4 ارب سے زائد رقم غیر ضروری طورپرخرچ کی گئی، اخراجات سے متعلق ہسپتال ریکارڈ میں تفصیل بھی موجود نہیں، لوکل خریداری کیلئے قواعد و ضوابط پرعمل نہ کرتے ہوئے 80 کروڑ28 ہزار روپے خرچ کئے گئے شہریوں نے نقصانات کی انکوائری کا مطالبہ کیاہسپتال انتظامیہ کے مطابق معاملے کے حوالے سے محکمہ صحت اور دیگر اعلیٰ حکام کو تحریری جواب دے دیا گیا ہے  اکاؤنٹس کمیٹی کے آئندہ اجلاس میں تمام معاملات واضح ہو جائیں گے۔ آڈٹ رپورٹ میں 15 کروڑ57 لاکھ روپے سے زائد کے کی جعلی معائنہ پرچیاں جاری ہونے کا انکشاف بھی کیا گیا ہے۔

 لیڈی ریڈنگ ہسپتال 

مزید :

صفحہ اول -