کورونا کی وجہ سے بند تعلیمی ادارے کھولنے کی درخواست خارج کرنے کا تحریری فیصلہ جاری

کورونا کی وجہ سے بند تعلیمی ادارے کھولنے کی درخواست خارج کرنے کا تحریری ...
کورونا کی وجہ سے بند تعلیمی ادارے کھولنے کی درخواست خارج کرنے کا تحریری فیصلہ جاری

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)کورونا کی وجہ سے بند تعلیمی ادارے کھولنے کی درخواست خارج کرنے کا تحریری فیصلہ جاری کردیاگیا، چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ اطہر من اللہ نے 2 صفحات پر مشتمل تحریری فیصلہ جاری کیا۔

فیصلے میں کہاگیاہے کہ عدالت یہ مفروضہ قائم نہیں کر سکتی کہ حکومت پرائیویٹ سکولز کے حقوق سے غافل ہے، عدالت یہ مفروضہ بھی نہیں بنا سکتی کہ سٹیک ہولڈرز کے حقوق کو نظرانداز کر رہے ہیں۔

اسلام آباد ہائیکورٹ کے تحریری فیصلہ میں کہاگیا ہے کہ کورونا نے ملک میں غیرمعمولی صورتحال پیدا کر دی، چیف جسٹس اطہر من اللہ نے کہاکہ غیرمعمولی حالات سے نمٹنے کےلئے فیصلے کرنا ایگزیکٹو کا اختیار ہے۔

تحریری فیصلے میں کہاگیا ہے کہ پالیسیاں عوام کے منتخب نمائندے بناتے ہیں، یہ مفروضہ قائم نہیں کیا جا سکتا کہ منتخب نمائندے عوامی مفاد کو نظرانداز کر رہے ہیں، عدالت نے کہاکہ طے شدہ قانون ہے کہ عدالتیں ایگزیکٹو کے پالیسی معاملات میں مداخلت نہیں کرتیں، درخواست ناقابل سماعت ہے مسترد کی جاتی ہے۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -