ہم جنس پرستوں میں مقبول ایپ گرِنڈر پر پاکستان میں پابندی، لیکن پاکستان میں سالانہ کتنے لاکھ لوگ اسے ڈاﺅن لوڈ کرتے تھے؟ جان کر آپ کی بھی حیرت کی انتہا نہ رہے

ہم جنس پرستوں میں مقبول ایپ گرِنڈر پر پاکستان میں پابندی، لیکن پاکستان میں ...
ہم جنس پرستوں میں مقبول ایپ گرِنڈر پر پاکستان میں پابندی، لیکن پاکستان میں سالانہ کتنے لاکھ لوگ اسے ڈاﺅن لوڈ کرتے تھے؟ جان کر آپ کی بھی حیرت کی انتہا نہ رہے

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) حکومت کی طرف سے ہم جنس پرستوں کے لیے بنائی گئی ڈیٹنگ ایپلی کیشن گرنڈر پر گزشتہ دنوں پابندی عائد کر دی تھی۔ یہ ایپلی کیشن پاکستان میں کتنے لوگ ڈاﺅن لوڈ کر چکے تھے۔ اس حوالے سے ایسے اعدادوشمار آ گئے ہیں کہ آپ کی حیرت کی انتہائی نہ رہے گی۔ ویب سائٹ ’پڑھ لو‘ کے مطابق گرنڈر نامی اس ایپلی کیشن کو گزشتہ ایک سال میں 3لاکھ سے زائد پاکستانیوں نے اپنے فونز میں انسٹال کیا۔

پاکستان ٹیلی کمیونی کیشن اتھارٹی نے جمعرات کے روز اس ڈیٹنگ ایپلی کیشن پر پابندی عائد کی۔ اس کے علاوہ دیگر ڈیٹنگ ایپلی کیشنز ٹنڈر، ٹیگڈ، سکاﺅٹ اور ’سے ہائے‘ پر بھی پابندی عائد کی گئی ہے۔ گرنڈر کے سی او او رِک میرینی نے رائٹرز سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ ”پاکستان میں گرنڈر اور دوسری ڈیٹنگ ایپلی کیشنز پر پابندی لگنا مایوس کن ہے۔ “ پی ٹی اے کی طرف سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ ان ایپلی کیشنز پر اس لیے پابندی عائد کی گئی کہ یہ پاکستانی قوانین کو خاطر میں نہیں لا رہی تھیں۔ اگر کمپنیاں پاکستانی قوانین کی پاسداری کی یقین دہانی کرائیں گی تو ان پر پابندی کے فیصلے پر نظرثانی کی جا سکتی ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -