کسی ادارے کو دوسرے کے معاملات میں مداخلت کی اجازت نہیں ، عدلیہ اپنی ذمہ داریاں اداکررہی ہے : چیف جسٹس

کسی ادارے کو دوسرے کے معاملات میں مداخلت کی اجازت نہیں ، عدلیہ اپنی ذمہ ...
کسی ادارے کو دوسرے کے معاملات میں مداخلت کی اجازت نہیں ، عدلیہ اپنی ذمہ داریاں اداکررہی ہے : چیف جسٹس

  

کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) چیف جسٹس آف پاکستان افتخار محمد چوہدری نے کہاکہ کوئی ادارہ دوسرے ادارے کے معاملات میں مداخلت نہیں کرسکتا، ترقی کیلئے قانون کی حکمرانی ضروری ہے اور عدلیہ اپنی آئینی ذمہ داریاں پوری کرنے کی بھرپور کوشش کررہی ہے ، آزاد عدلیہ اُسی وقت کام کرسکتی ہے جب اُسے آزاد بار کا ساتھ مل جائے ۔وکلاءسے خطاب کرتے ہوئے چیف جسٹس نے کہاکہ دستور کی بحالی کیلئے وکلاءکا کردارناقابل فراموش ہے ، عدلیہ کی آزادی کیلئے چلنے والی وکلاءتحریک کی مثال نہیں ملتی ، قانون کی حکمرانی کے بغیر ترقی ممکن نہیں ۔ چیف جسٹس نے کہاکہ اپنی آئینی ذمہ داریاں پوری کرنے کے لیے عدلیہ پوری کوشش کررہی ہے ، عدلیہ پر عوام کے بنیادی حقوق کیلئے کام کرنے کی ذمہ داری ہے ، آزاد عدلیہ اُسی وقت کام کرسکتی ہے جب آزادبار کاساتھ مل جائے ، انصاف کے حصول کو آسان بنانے کے لیے بار کا کردار بہت اہم ہے ۔

مزید : کراچی /اہم خبریں