عوامی رکشہ یونین کا کل سے مظاہروں ،شاہراؤں کو بند کرنیکا اعلان

عوامی رکشہ یونین کا کل سے مظاہروں ،شاہراؤں کو بند کرنیکا اعلان

 لاہور(وقائع نگار )عوامی رکشہ یونین نے شہر میں رکشہ اسٹینڈز کے قیام کے مطالبے اور لاہور ٹرانسپورٹ کمپنی کی جانب سے بلا جواز ظالمانہ چالا ن پر اعلا ن بغاوت کر تے ہوئے کل سے احتجاجی مظاہروں اور اہم شاہراہوں کو بند کر نے کا عندیہ دیے دیا ہے جس کے پہلے مر حلے میں کل سکیم موڑ سے بھکھیے والے موڑ تک سینکڑوں رکشوں کے ہمراہ احتجا جی ریلی نکا لی جائے گی اور ٹر یفک کا نظام مکمل طور پر مفلوج کر تے ہوئے اپنے جائز مطا لبات کی باز گشت حکمرانوں تک پہنچائی جائے گی جبکہ روزانہ کی بنیاد پر شہر کی ایک اہم شاہراہ پر رکشہ ڈرائیور ز احتجا ج کیا کر یں گے اور یہ سلسلہ ایل ٹی سی کی جانب سے کیے جانے والے ظلم کے بند ہو نے تک جاری رہے گا ان خیا لات کا اظہار گزشتہ روز عوامی رکشہ یو نین پاکستان کے چیئر مین مجید غوری نے پاکستان سے گفتگو کر تے ہوئے کیا ۔جبکہ گزشتہ روز عوامی رکشہ یو نین نے پریس کلب کے باہر لاہور ٹرانسپورٹ کمپنی کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا۔جس کی وجہ سے ٹریفک کا نظام دھرم بھرم ہوگیااور گاڑیوں کی لمبی لائنیں لگ گئیں۔مظاہرے کی قیادت عوامی رکشہ یونین پاکستان کے چیئرمین مجید غوری کررہے تھے۔مظاہرین بے جا چالانوں، ایل ٹی سی کے اہلکاروں کے ہتک آمیز رویے کے خلاف نعرے بازی اور سینہ کوبی کرتے رہے ۔مجید غوری نے مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے حکومت سے مطالبہ کیا کہ ایل ٹی سی کو ہمارے چالانوں اور اہلکاروں کی غنڈہ گردی سے روکا جائے ۔انہوں نے کہا کہ لاہور ٹرانسپورٹ کمپنی کے اہلکار بھاری جرمانے کرتے ہیں۔ وجہ پوچھنے پر سنگین نتائج کی دھمکیاں اور زدو کوب کرنے سے بھی دریغ نہیں کرتے۔مجید غوری نے کہا ہے کہ آج سے ہم نے لاہورٹرانسپورٹ کمپنی کے خلاف احتجاجی مظاہروں کا سلسلہ شروع کردیاہے۔ جو مطالبات کی منظوری تک جاری رہے گا۔منگل 7 اپریل کوبھیکھے وال موڑ سے سکیم موڑ تک ایل ٹی سی کے خلاف ایک بڑی احتجاجی ریلی نکالی جائے گی ۔ اس کے بعد شہر کی مختلف بڑی سڑکوں اور علاقوں میں احتجاج کا سلسلہ جاری رہے گا۔ اگلے مرحلے میں ہم تما م سیاسی پارٹیوں کے رہنماؤں ، وکلا تنظیموں کے نمائندوں، سول سو سائیٹی اور مزدور تنظیموں کے رہنماؤں کو بھی احتجاجی مظاہرے میں دعوت دی جائیگی ۔ اور ایل ٹی سی کے دفتر کا گھراؤ کیا جائیگا۔ اس موقع پر لاہور ٹرانسپورٹ کمپنی کے خلاف وائیٹ پیپر جاری کیا جائے گا۔ مجید غوری نے کہا کہ ایل ٹی سی والوں نے اتنے اتنے بھاری جرمانے کرنے شروع کر دیئے ہیں کہ ہفتہ بھر کی بچت ایک لمحہ میں ہاتھ سے نکل جاتی ہے۔ انہوں نے وزیر اعلیٰ سے بھی نوٹس لینے کی پیل کی اور چیف جسٹس ہائیکورٹ سے بھی غریبوں کی جیبوں پر پڑنے والے ڈاکے کا نوٹس لینے کی استدعا کی ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1