پی ٹی آئی میں شریف گھرانوں کی لڑکیاں شامل نہیں ہوسکتیں:ریحام

پی ٹی آئی میں شریف گھرانوں کی لڑکیاں شامل نہیں ہوسکتیں:ریحام

لاہور (اے این این)عمران خان کی سابقہ اہلیہ ریحام خان پھر میدان میں آگئیں جنہوں نے پی ٹی آئی خواتین کو مخاطب کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر تمہاری پارٹی کوکوئی خوف خدا ہوتا تو معزز اور شریف گھرانوں کی لڑکیاں بھی آپ کی پارٹی کا ایک حصہ ہوتیں ۔ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ریحام خان نے پی ٹی آئی کی خواتین کو مخاطب کر کے گرما گرم ب چھیر دی ہے ریحام خان نے پی ٹی آئی خواتین کو اڑے ہاتھوں لیتے ہوئے تنقید کا نشانہ بنا ڈالا جس پر کارکنوں اور عمران خان کے چاہنے والوں کی جانب سے انہیں شدید تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے ۔ ریحام خان نے تحریک انصاف کو خواتین کی شمولیت میں رکاوٹ بن کر جمہوریت کی اصل روح کو پامال کرنے کا الزام بھی عائد کیا ۔ریحام خان نے مزید کہا کہ جنہیں اللہ ہدایت نہیں دیتا ہم ان کی رہنمائی کیسے کر سکتے ہیں ؟ کسی جماعت میں بھی حقیقی جمہوریت نہیں ہے ۔کیا آپ نے کبھی کسی نوجوان کو ان کے ساتھ سٹیج پر بیٹھا دیکھا ہے ؟ وہ تمام خواتین جو ان کے جلسوں میں آتی ہیں کیا آپ نے انہیں اس جگہ تک پہنچتے دیکھا ہے ؟ نوجوان لڑکیاں اور خواتین مجھ سے شکایت کرتی ہیں کہ وہ ان لوگوں کے ساتھ نہیں بیٹھ سکتیں ۔ریحام خان کے ان بیانات پر پی ٹی آئی کارکن بھی آپے سے باہر ہو گئے اور سوشل میڈیا پر انہیں شدید تنقید کا نشانہ بناتے رہے ۔پی ٹی آئی کارکنوں نے اپنے ٹویٹر پیغامات میں کہا کہ ریحام خان دقیا نوسی خاتون کی طرح اپنے غصے کا اظہار کر رہی ہیں جنہیں اب محسوس ہو رہا ہے کہ انہوں نے کیا کھویا اور کبھی اس کا مداوا کرنے کے قابل نہیں ہونگی ۔ایک خاتون کارکن نے اپنے ٹویٹر پیغام میں کہا کہ عمران خان اپنی خاموشی سے ریحام خان کو جواب دیتے رہیں گے ۔عمران خان کے ایک کھلاڑی نے ریحام خان کے بیان کا جواب دیتے ہوئے ٹویٹ کیا کہ ریحام خان تمام خواتین کیلئے باعث شرمندگی ہیں جس پر انہیں معافی مانگی چاہئیے ۔سفینہ الہی نے اپنے ٹویٹ میں کہا کہ ریحام خان نے تحریک انصاف کی خواتین پر زبانی وار کر کے ثابت کر دیا کہ وہ کمزور ترین خاتون ہیں ۔

مزید : صفحہ آخر