دو شہریوں پر بلاوجہ تشدد،سب انسپکٹر سمیت 6 اہلکاروں کیخلاف انکوائری کا حکم

دو شہریوں پر بلاوجہ تشدد،سب انسپکٹر سمیت 6 اہلکاروں کیخلاف انکوائری کا حکم

لاہور( خبرنگار) ایس ایس پی ڈسپلن نے عمر رسیدہ شخص سمیت دو افراد کو بلاوجہ قید میں رکھ کر تھانہ میں چھتر مارنے پر تھانہ غازی آباد کے سب انسپکٹر مخدوم علی ، کارخاص اہلکار مقصود جٹ سمیت 6 اہلکاروں کے خلاف انکوائری کا حکم دے دیا ہے۔ ایس ایس پی ڈسپلن کو ایک شہری شہزاد علی نے درخواست دی کہ غازی آباد پولیس نے ایک عورت کو منشیات کے الزام میں پکڑا۔ اپنے ایک عمر رسیدہ رشتے دار اشرف کے ہمراہ تھانہ جانے پر انہیں سب انسپکٹر مخدوم علی، کارخاص اہلکاروں مقصود جٹ ، محسن اور اختر وغیرہ نے پہلے تھپڑ مارے اور بعد میں اُلٹا لٹا کر چھتر مارے اور بعد میں دونوں کی جیبوں سے 2015 روپے نکال کر تھانہ سے نکل جانے کا حکم دے یا۔ شہری شہزاد احمد کی درخواست پر ایس ایس پی ڈسپلن طارق عزیز نے انکوائری کا حکم دے دیا ہے ۔ اس حوالے سے سب انسپکٹر مخدوم علی نے اپنے موقف میں بتایا کہ سابق ایس ایچ او عتیق ڈوگر کے حکم پر چھتر مارے، تاہم پیسے نکالنے کا عمل نہیں ہے،جبکہ سابق ایس ایچ او عتیق ڈوگر نے بتایا کہ اسے واقعہ کا علم نہیں ہے۔

مزید : صفحہ آخر