پنجاب یونیورسٹی امتحانات: قانون کی سنگین خلاف ورزی پر وزیر ہائر ایجوکیشن ان ایکشن

پنجاب یونیورسٹی امتحانات: قانون کی سنگین خلاف ورزی پر وزیر ہائر ایجوکیشن ان ...

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر) پنجاب یونیورسٹی کے تحت گزشتہ روز بی اے بی ایس سی سالانہ امتحان17ء کا آغاز ہوگیا ۔ امتحانات میں 2 لاکھ 27 ہزار اْمیدوار شرکت کر رہے ہیں جس کیلئے لاہور سمیت صوبہ بھر میں 870 امتحانی مراکز بنائے گئے ہیں۔گزشتہ روز انگریزی، عمرانیات اور کشمیریات کے مضمون کے پرچے ہوئے۔ وزیر ہائر ایجوکیشن سید رضا علی گیلانی نے وحدت روڈپر قائم مرکزی امتحانی مرکز کا اچانک دورہ کیا اور انتظامات کا جائزہ لیا، امتحانی عملہ کی چیکنگ پر وزیر کو معلوم ہوا کہ پرائیویٹ سکولز اور کالجوں کے اساتذہ کی ڈیوٹیاں لگا دی گئی ہیں اور سرکاری کالجوں کے اساتذہ کو ڈیوٹیاں دینے کا پاپند نہیں بنایا گیا جس پر وزیر تعلیم نے برہمی کا اظہار کیا،وزیر تعلیم کے استفسار پر سپرنٹنڈنٹ نے جواب دیا سرکاری اساتذہ کی عدم دلچسپی و عدم دسیتابی کے پیش نظر نجی سکول کالجز کے اساتذہ کی ڈیوٹیاں لگائی ہیں جس پر وزیر تعلیم نے سپرنٹنڈنٹ سے تحریری طور پر لکھوایا کہ اْنہیں سرکاری کالجوں کے اساتذہ فراہم کیے جائیں،جبکہ وزیر تعلیم نے پرائیویٹ اساتذہ کی ڈیوٹیاں لگانے پر کنٹرولر امتحانات سے جواب بھی طلب کرنے سمیت آج سے پرائیویٹ عملے کی ڈیوٹیاں منسوخ کرنے کے احکامات جاری کر دیئے ۔ واضح رہے پنجاب یونیورسٹی ضوابط کے تحت پرائیویٹ اساتذہ کو امتحانی عملہ کا حصہ بنایا جاسکتا نہ ہی اْنہیں نگرانی کی ڈیوٹیاں دی جاسکتی ہیں۔دوسری جانب بی اے امتحان کے پہلے پرچے میں ہی وحدت روڈامتحانی مرکز لاہور سے کشمیریات کے طالبعلم سے بوٹی برآمد ہوئی جبکہ وزیر تعلیم نے اصل اْمیدوار کی جگہ پرچہ دیتے ہوئے جعلی اْمیدوار کو بھی پکڑ لیا۔رول نمبر 091574 علی حیدر شاہ کی جگہ عبد الرحمٰن بی اے انگریزی کا پرچہ دے رہا تھا ، عبد الرحمن نے اپنے بیان میں کہا سپرنٹنڈنٹ نے اْسے پرچہ دینے کیلئے بٹھایا جبکہ اصل اْمیدوار علی حیدر شاہ علامہ اقبال ٹاؤن کا رہائشی ہے اور میرا ہمسایہ ہے۔عبد الرحمن سے علی حیدر شاہ کا اصل شناختی کارڈ بھی برآمد ہوا،جعلی اْمیدوار عبد الرحمن کو یونیورسٹی نے پولیس کے حوالہ کر دیا ہے جبکہ اصل اْمیدوار علی حیدر شاہ کی گرفتاری بھی عمل میں لائی جائے گی ۔دوسری طرف اسی امتحانی مرکز سے کشمیریات کے طالبعلم محمد علی رول نمبر 45004 سے بوٹی برآمد ہوئی جس کیخلاف موقع پر ہی یو ایم سی بنا دی گئی ہے ۔سید رضا علی گیلانی کا کہناتھا تھا امتحانات کی نگرانی مزید سخت اور وہ اچانک دوروں سے چیک اینڈ بیلنس کا سلسلہ جاری رکھیں گے۔ جعلی اْمیدوار کا امتحانی سنٹر میں دو گھنٹے تک پرچہ حل کرنا نگرانی کے نظام پر سوالیہ نشان ہے،اس واقعہ کی مزید تفتیش کی جائے گی۔پنجاب یونیورسٹی کےتحت بی اے بی ایس سی امتحانات میں اس بار پارٹ ون اور پارٹ ٹو کے الگ الگ امتحانات لیے جارہے ہیں جبکہ آخری مرتبہ کمپوزٹ امتحان بھی ہورہا ہے۔

مزید : صفحہ آخر