ملتان: مختلف علاقوں میں دکانیں اوپن‘ پولیس مال پانی لیکر غائب

  ملتان: مختلف علاقوں میں دکانیں اوپن‘ پولیس مال پانی لیکر غائب

  

ملتان (نیوز رپورٹر) کورونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کے لیئے حکومت کی جانب سے لاک ڈاون و کرفیو کے نفاذ کے باوجود شہر کے متعدد علاقوں میں دکانیں کھلی پائی جارہی (بقیہ نمبر31صفحہ6پر)

ہیں جن میں کلاتھ و دیگر اشیاء کی فروخت آدھے کھلے شٹر کی آڑ میں جاری ہے ضلعی انتظامیہ اور پولیس حکام کی جانب سے بارہا حفاظتی اقدام بارے آگاہی دینے اور گھروں تک محدود رہنے کی تلقین کے باوجود پرانا شجاع آباد روڈ، بلال چوک، لکڑ منڈی روڈ، ایم ڈی اے چوک، پل براراں، گلشن مارکیٹ، ممتاز آباد، امیر آباد، چوک شہیداں اور النگ سرکل روڈ پر متعدد دکاندار آدھ کھلے شٹروں سے کاروبار جاری رکھے ہوئے ہیں اس گھمبیر وبائی وائرس کی موجودگی میں تاجروں کا عدم تعاون کسی بڑے سانحہ کا پیش خیمہ ہوسکتا ہے عوامی حلقوں کے مطابق شہر بھر میں لاک ڈاون ہونے کے باوجود پولیس پٹرولنگ کا چند چوکوں تک محدود ہوکر رہ جانا بھی باعث تعجب ہے جس سے فائدہ اٹھاتے ہوئے قانون شکن عناصر حکومتی ہدایات کو ہوا میں اڑاتے نظر آرہے ہیں دوسری طرف پولیس کے روزانہ کی بنیاد پر پتنگ بازوں اور فروخت کنندگان کے خلاف بڑے پیمانے پر کریک ڈاون کے باوجود آسمان پر پتنگوں کا نظر آنا پولیس حکام کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے عوامی حلقوں نے سی پی او ملتان زبیر دریشک سے مطالبہ کیا ہے کہ انسانی جانوں کے تحفظ کو یقینی بنانے کے لیئے پتنگ باز اور پتنگ مافیا کے خلاف آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائے۔

غائب

مزید :

ملتان صفحہ آخر -