چینی آٹا بحران تحقیقاتی رپورٹ ، وزیر خوراک کے استعفیٰ کے بعد عثمان بزدار نے دو مزید اعلیٰ عہدیداروں کو فارغ کر دیا

چینی آٹا بحران تحقیقاتی رپورٹ ، وزیر خوراک کے استعفیٰ کے بعد عثمان بزدار نے ...
چینی آٹا بحران تحقیقاتی رپورٹ ، وزیر خوراک کے استعفیٰ کے بعد عثمان بزدار نے دو مزید اعلیٰ عہدیداروں کو فارغ کر دیا

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے 2019 میں سیکریٹری خوراک پنجاب رہنے والے موجودہ کمشنر ڈی جی خان نسیم صادق کو عہدے سے ہٹا دیاہے ۔

نجی ٹی وی جیونیوز کے مطابق پنجاب کے وزیر خوراک سمیع اللہ چوہدری نے انکوائری میں نام آنے پر عہدے سے استعفیٰ دیدیاہے اور کہاہے کہ الزامات کے ختم ہونے تک وہ کوئی حکومتی عہدہ نہیں رکھیں گے تاہم  ان کے بعد اب کمشنر ڈی جی خان نسیم صادق کو او ایس ڈی بنا دیا گیاہے ، وہ 2019 میں سیکریٹری خوراک رہے ہیں ، انہوں نے رضاکارانہ طور پر وزیراعلیٰ پنجاب کو پیشکش کی تھی کہ وہ انہیں انکوائری مکمل ہونے تک عہدے سے ہٹا دیں جس پر عثمان بزدار نے عملدرآمد کر دیا ہے ۔ان کے علاوہ 2019 میں ڈائریکٹر فورڈ پنجاب رہنے والے ظفر اقبال کو بھی عہدے سے ہٹاتے ہوئے او ایس ڈی بنا دیا گیاہے ۔

یاد رہے کہ کچھ دیر قبل وزیر خوراک پنجاب سمیع اللہ چوہدری نے وزیراعلیٰ عثمان بزدار سے ملاقات کر کے عہدے سے استعفیٰ دیدیا ہے۔ سمیع اللہ چوہدری نے وزیراعلیٰ عثمان بزدار سے ملاقات کی جو کہ پندرہ منٹ تک جاری رہی جس کے بعد انہوں نے عہدے سے استعفیٰ دیدیا ہے ۔اپنے استعفے میں انہوں نے موقف اختیار کیاہے کہ جب سے ایف آئی اے کی رپورٹ آئی ہے اس پر مجھ سے بہت سے الزامات لگ رہے ہیں ، جب تک الزامات کلیئر نہیں ہوتے میں اس وقت کوئی حکومتی عہدہ نہیں لوں گا ،مجھ پر الزام ہے کہ محکمے کے ریفارمز نہیں کر سکا ۔

یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے اپنا وعدہ پورا کرتے ہوئے چینی آٹا بحران پر موصول ہونے والی تحقیقاتی رپورٹ کو عوام کیلئے جاری کر دیا ہے۔

مزید :

قومی -