کراچی میں ایک گھنٹے کے دوران 4 دھماکے، کوئی جانی نقصان نہیں ہوا

کراچی میں ایک گھنٹے کے دوران 4 دھماکے، کوئی جانی نقصان نہیں ہوا
کراچی میں ایک گھنٹے کے دوران 4 دھماکے، کوئی جانی نقصان نہیں ہوا

  



کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) شہر قائد میں یکے بعد دیگرے 4 دھماکے ہوئے تاہم ان دھماکوں کے نتیجے میں کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔ چاروں دھماکے ڈیفنس اور گلشن اقبال کے علاقوں میں موجود وائن شاپس کے سامنے ہوئے لیکن دکانیں بند ہونے کے باعث کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔ پولیس کے مطابق پہلا دھماکہ خیابان مسلم میں ایک موٹر سائیکل میں ہوا جس کے بعد پولیس اور دیگر قانون نافذ کرنے والے ادارے موقع پر پہنچ گئے اور موٹر سائیکل کے مالک کو گرفتار کر لیا۔ ایس ایس پی کلفٹن سرفراز نواز نے دھماکے اور گرفتاری کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ گرفتار شخص کو تفتیش کیلئے نامعلوم مقام پر منتقل کر دیا گیا ہے۔ اس کے کچھ ہی دیر بعد ڈیفنس ہی کے علاقے خیابان راحت میں موجود وائن شاپ کے باہر دھماکہ ہوا تاہم اس دھماکے میں بھی کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔ ایس ایس پی کلفٹن سرفراز نواز کے مطابق دوسرا دھماکہ بارودی مواد کا تھا جو وائس شاپ کے باہر نصب کیا گیا تھا۔ ابھی دوسرے دھماکے سے متعلق تفتیش جاری تھی کہ خیابان صباءمیں موجود وائن شاپ کے باہر تیسرا دھماکہ ہو گیا، پولیس کے مطابق اس دھماکے میں بھی کوئی جانی نقصان نہیں ہوا تاہم دکان کو جزوی نقصان پہنچا۔ چوتھا دھماکہ صباءایونیو میں موجود وائن شاپ کے باہر ہوا تاہم یہاں بھی کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔ پولیس کے مطابق چاروں دھماکے بند وائن شاپس کے باہر کئے گئے ہیں جبکہ ان دھماکوں کے بعد کلفٹن اور صدر کی تمام وائن شاپس پر سیکیورٹی سخت کر دی گئی ہے۔ ایڈیشنل آئی جی غلام قادر نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ جن چار دکانوں کے سامنے دھماکے ہوئے ہیں ان کا مالک ایک ہی شخص ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ یہ دھماکے ذاتی دشمنی یا بھتہ خوری کا واقعہ بھی ہو سکتا ہے۔

مزید : کراچی