شادی کی تقریب میں یکدم پولیس کی آمد، آتے ہی دلہن کو گرفتار کرلیا کیونکہ۔۔۔

شادی کی تقریب میں یکدم پولیس کی آمد، آتے ہی دلہن کو گرفتار کرلیا کیونکہ۔۔۔
شادی کی تقریب میں یکدم پولیس کی آمد، آتے ہی دلہن کو گرفتار کرلیا کیونکہ۔۔۔

  


لندن (نیوز ڈیسک) شادی کا دن کسی بھی دلہن کے لئے انتہائی خوبصورت اور یادگار ہوتا ہے مگر برطانیہ میں ایک دلہن کے لئے شادی کا دن زندگی کا دردناک ترین باب بن گیا۔ بیچاری دلہن سسیلیا سیاﺅ کی شادی کی تقریب جاری تھی اور وہ اپنے جرمن دولہے کی شریک حیات بننے کے لئے قبول، قبول کہنے ہی والی تھی کہ پولیس آن پہنچی۔ ظالم پولیس والوں نے آﺅ دیکھا نہ تاﺅ، سیدھے سٹیج پر گئے اور دلہن کو ہتھکڑیاں لگادیں۔ دولہے کے گھر جانے کی بجائے کچھ ہی دیر میں دلہن تھانے پہنچ چکی تھی۔

ایک بوسہ اس نوجوان سعودی لڑکی کو بے حد مہنگا پڑگیا، اپنوں نے ہی وہ کام کردیا کہ کبھی خوابوں میں بھی نہ سوچا ہوگا

تقریب میں شامل مہمان ہکا بکا تھے اور اس وقت انہیں ایک اور جھٹکا لگا جب پتہ چلا کہ دلہن ناصرف برطانیہ میں غیر قانونی طور پر مقیم تھی بلکہ اس نے اپنے قیام کو قانونی رنگ دینے کے لئے جعلی دستاویزات بھی بنوارکھی تھیں۔ ویب سائٹ WWWNکی رپورٹ کے مطابق سیاﺅ تین سال قبل برطانیہ آئی تھی۔ جب اس کے ویزے کی معیاد ختم ہوگئی تو اس نے جعلی ویزوں کا کام کرنے والے ایک شخص سے 7ہزار ڈالر (تقریباً 7لاکھ پاکستانی روپے ) میں جعلی دستاویزات بنوالیں۔ عروسی لباس اور زیورات پہنے ہوئے دلہن کو عدالت میں پیش کیا گیا جہاں اسے امیگریشن قوانین سے متعلقہ دو جرائم کی مرتکب قرار دے کر چھ ماہ کے لئے جیل بھیج دیا گیا۔ سزا مکمل ہونے کے بعد اسے برطانیہ سے بے دخل کردیا جائے گا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...