بچوں کا اغواء یاگمشدگی ،پولیس کیخلاف شکایات کیلئے ہیلپ لائن کا قائم

بچوں کا اغواء یاگمشدگی ،پولیس کیخلاف شکایات کیلئے ہیلپ لائن کا قائم

لاہور(نامہ نگار خصوصی )بچوں کے اغواء اورگمشدگی کے معاملے پر سپریم کورٹ کے حکم پر قائم اعلی سطحی کمیٹی نے بچوں کے اغواء یاگمشدگی کی اطلاع اور پولیس کے خلاف شکایات کے اندراج کے لئے ہیلپ لائن کا قائم کردی ہے۔اس بات کا اعلان کمیٹی کے چیئرمین ایڈووکیٹ جنرل پنجاب اور دیگر ارکان نے لاہور ہائیکورٹ بار میں مشترکہ پریس کانفرنس میں کیا۔اس موقع پرا سسٹنٹ ایڈووکیٹ جنرل پنجاب رائے اشفاق احمد کھرل بھی موجود تھے ،کمیٹی کے رکن اور سپریم کورٹ بار کے صدر علی ظفر نے بتایا کہ1121 ہیلپ لائن قائم کی ہے جو چوبیس گھنٹے کام کرے گی،علی ظفر نے بتایا کہ کمیٹی سات روز میں تمام معلومات اکٹھی کرکے رپورٹ تیار کرے گی ۔کمیٹی کے سربراہ ایڈووکیٹ جنرل پنجاب شکیل الرحمن خان نے بتایا کہ پولیس رپورٹ کے مطابق 2011 سے 2016 تک139 بچے بازیاب نہیں ہوسکے تاہم چند میں سے یہ رپورٹ آئی ہے کہ یہ بچے اغوا نہیں بلکہ گھر سے اپنی مرضی سے گئے تھے ، سپریم کورٹ بار کے صدر علی ظفر نے کہا کہ جس طرح چیف جسٹس سندھ کا بیٹا بازیاب ہوا اس طرح ہر بچہ بازیاب ہونا چاہیے۔کمیٹی حکومت کی بچوں کے اغوا کی وارداتوں کے تدارک اور قانون سازی کے سفارش بھی کرے گی ۔سپریم کورٹ بار کے صدر نے بتایا کہ تفتیش میں ناقص کارکردگی دکھانے والے پولیس افسران کے خلاف کارروائی کے لئے کمیٹی آئی جی پنجاب کو سفارش کرے گی۔

مزید : صفحہ آخر


loading...