مینگروو کے درخت کی جڑوں کے گرد ماحول دوست جراثیم دریافت

مینگروو کے درخت کی جڑوں کے گرد ماحول دوست جراثیم دریافت
مینگروو کے درخت کی جڑوں کے گرد ماحول دوست جراثیم دریافت

  


ریاض(مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی عرب میں ماہرین نے مینگروو (تمر) کی جڑوں کے ساتھ ایسے بیکٹیریا دریافت کیے ہیں جو نہ صرف انہیں بلکہ ارد گرد کے ماحول کو بھی ماحولیاتی آلودگی کے نقصان دہ اثرات سے بچاتے ہیں۔یہ نئے بیکٹیریا بحیرہ احمر کے ساحلوں پر موجود ’’ایوی سینیا مرینا‘‘ یا ’’سرمئی مینگروو‘‘ کے نام سے مشہور درختوں کی جڑوں (rhizosphere) کے ارد گرد مٹی میں بطورِ خاص پائے گئے جب کہ ان بیکٹیریا کے جینیاتی تجزیئے سے ان میں منفرد جین بھی شناخت کیے گئے ہیں۔ سائنسدانوں کو یقین ہے کہ ماحولیاتی ا?لودگی کا سامنا ہونے پر ایوی سینیا مرینا سے کچھ ایسے مادے خارج ہوتے ہیں جو مفید جرثوموں (بیکٹیریا) کو ان کی جڑوں کی طرف کھینچتے ہیں، جہاں پہنچ کر یہ نہ صرف مینگروو کی جڑوں کو بلکہ آس پاس کے سمندری پانی اور ریت کو بھی آلودگیوں سے صاف کرتے ہیں۔

مزید : صفحہ آخر


loading...