لیڈی ڈاکٹر آپریشن سے پہلے فیس پر بضد‘ مریضہ خالق حقیقی کو جا ملی

لیڈی ڈاکٹر آپریشن سے پہلے فیس پر بضد‘ مریضہ خالق حقیقی کو جا ملی

علی پور(نمائندہ پاکستان)لیڈی ڈاکٹر کی ہٹ دھرمیسے حاملہ خاتون تڑپ تڑپ کر دم توڑ گئی تفصیل کے مطابق علی پورکے نواحی علاقہ مٹھن والی کے رہائشی غلام مصطفیٰ ، عبدالرشید، محمداختر نے صحافیوں کوبتایا کہ ہم شفیعہ مائی کو سول ہسپتال علی پور بغرض ڈیلیوری لے کر آئے تو ڈیوٹی پر موجود لیڈی (بقیہ نمبر6صفحہ11پر )

ڈاکٹر سندس نے چیک اپ کے بعدبتایا کہ خاتون کے پیٹ میں بچہ فوت ہوچکاہے اب اس کا آپریشن کرنا پڑے گا 6گھنٹے انتظار کے بعد لیڈی ڈاکٹر سندس نے مڈوائف کو بھیجا اورکہاکہ اگر مریضہ کی زندگی بچانی ہے تو فوراً 20000(بیس ہزار) روپے کا بندوبست کروجس پر میں نے 5000(پانچ ہزار)روپے لیڈی ڈاکٹر سندس کو دیئے اورباقی رقم صبح دینے کاوعدہ کیاجس پر لیڈی ڈاکٹر سندس ٹال مٹول سے کام لیتی رہی اور رقم مکمل کرنے کاکہا منت سماجت کرنے پر لیڈی ڈاکٹر سندس آپے سے باہر ہوگئی اورکہاکہ اگر رقم پوری 20000روپے نہ ہے تو مریضہ کو واپس لے جاؤ ہمیں اوربھی کام ہیں ہماراوقت برباد نہ کرو اسی اثناء میں مریضہ شفیعہ مائی جوکہ چاربچوں کی ماں تھی دردوں کی تاب نہ لاتے ہوئے خالق حقیقی سے جاملی۔ لیڈی ڈاکٹر سندس اوردیگر سٹاف نے کسی بھی کاروائی کرنے پر سنگین نتائج کی دھمکیاں دیں اورفوری طورپر ہمیں ہسپتال سے باہرنکال دیا۔میں نے لیڈی ڈاکٹر سندس اوردیگر سٹاف کے خلاف ڈی ایچ او کو درخواست گزاری جس پر ڈی ایچ او نے الزام علیہان کے خلاف ڈاکٹر وسیم کو انکوائری آفیسر مقرر کیا انکوائری آفیسر ڈاکٹر وسیم پیشی پہ پیشی دیتا رہاآخر کار3-8-16کو صاف انکارکرتے ہوئے کہاکہ میں اپنے سٹاف کے خلاف کوئی انکوائری نہیں کروں گا آپ نے جو کرنا ہے کرلو۔متوفیہ شفیعہ مائی کے لواحقین اور اہل علاقہ غلام مصطفیٰ، عبدالرشید ولد محمدبخش،محمد اختر ولدغلام نازک، حضوربخش ،ارشد خان،عبدالرحیم،محمدوسیم بوہڑ،شہباز علی،نبی بخش سمیت درجنوں افراد نے احتجاج کرتے ہوئے وزیراعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف،سیکرٹری ہیلتھ لاہور،ڈائریکٹر ہیلتھ ،کمشنر ڈیرہ غازیخان سے اپیل کی ہے ڈاکٹر سندس اورغفلت کے مرتکب عملہ کے خلاف کاروائی کرتے ہوئے قرار واقعی سزا دے کرانصاف فراہم کیاجائے۔

بضد

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...