بدبخت بیٹوں نے باپ کے خون سے ہاتھ رنگ لئے ،بیوی زخمی

بدبخت بیٹوں نے باپ کے خون سے ہاتھ رنگ لئے ،بیوی زخمی

پشاور(کرائمز رپورٹر)خون سفید ہوگیا ،پشاور کے نواحی علاقہ بڈ ھ بیر کے گاؤں ٹیلہ بند گڑھی محمد حسن میں جائیداداور رقم کے لالچ میں اندھے بیٹوں نے اپنے ہی والد کوبے دردی سے قتل کردیا فائرنگ سے انکی دوسری بیوی صائمہ ہاتھ اور پاؤں پر لگ کر شدید زخمی ہوگئی جبکہ انکے بچے معجزانہ طور پر بچ گئے ۔تاہم پھر بھی تھانہ بڈھ بیر پولیس نے کسی قسم کی کاروائی نہیں کی اور ملزمان دھندناتے پھر رہے ہیں۔ان خیالات کا اظہار بڈھ بیر کے علاقہ ٹیلہ بند گھڑی محمد حسن کی رہائشی خاتون صائمہ روزجہ غلام شریف نے پشاور پریس کلب میں میڈیاسے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔متاثرہ خاتون نے کہاکہ ان کا شوہر سرکاری ملازم اور درددل رکھنے والا انسان تھے۔ انہوں نے اپنے بھانجوں اور بیٹوں عرفان اللہ ،فرمان اللہ ،عارف اور سید ول سکنہ انذری کا خیال رکھتے تھے ۔جب انہوں نے قرض رقم مانگ نے کااستفسارکیا توانکے شوہر غلام شریف نے گائے اور تین تولہ سونا دیکر اپنی ضرورت کیلئے فروخت کرنے کوکہا۔جن کے پیسو ں پران بہنوئی بیرون ملک مزدوری کیلئے چلاگیا ۔اس میں کئی دن گزرنے کے بعدجب ہم ارقم واپس مانگنے کیلئے نکے گھر گئے اور رقم کا مطالبہ کیا اور جب واپس گھر آرہے تھے تو پہلے سے تھاک میں بیٹھے عرفان اللہ ،فرمان اللہ ،عارف اور سید ول سکنہ انذری نے ہم پر اندھادھندفائرنگ کھول دی جسکے نتیجے میں ان کاشوہر غلام شریف موقع پر جان بحق ہوگئے جبکہ وہ ہاتھ اور پاؤں پر لگ کر شدید زخمی ہوگئیں ،تاہم فائرنگ سے انکے بچے معجزانہ طور پر بچ گئے ۔متاثرہ خاتون صائمہ نے کہاکہ انکے شوہر کے بیٹوں کو انکے دوسری بیوی سے تھے اکی نظریں انکے ایک کنال زمین پر بھی تھی ۔جسکے بناء پر اپنے والد کو قتل کردیا ۔انہوں نے کہاکہ میں غریب خاتون ہوں۔میراایک بیٹا اور دو بیٹیاں ہیں جو بہت چھوٹے ہیں ۔شوہر کے مرنے کے بعد اب وہ مکمل طور پر بء سہارا ہوچکی ہیں انکے لئے گھر کے اخراجات پورے کرنا اور بچوں کی کفالت مشکل ہوگیا ہے تاہم مخالفین اب بھی انہیں جان سے مارنے کی دھمکیاں دے رہے ہیں۔جس نے انکی زندگی اجیرن کردی ہے ۔انہوں نے چیف جسٹس پشاور ہائیکورٹ ،عمران خان ،وزیراعلیٰ خیبر پختونخواپرویز خٹک اور آئی جی پولیس خیبر پختونخواسے مطالبہ کیاہے کہ انہیں تحفظ فراہم کرے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...