ضلع کونسل بونیر کا غیر ترقیاتی بجٹ 3ارب 33کروڑ سے زائد کا بجٹ پیش

ضلع کونسل بونیر کا غیر ترقیاتی بجٹ 3ارب 33کروڑ سے زائد کا بجٹ پیش

 بونیر (ڈسٹرکٹ رپورٹر )ضلع ناظم بونیر ڈاکٹر عبیداللہ نے مالی سال 2016/17 کے لئے بونیر کا ترقیاتی اور غیر ترقیاتی بجٹ 3 ارب ،33 کروڑ اٹھ ہزار پانچ سو روپے ضلع کونسل بونیر کو پیش کیا ۔تنخواہ کی مد میں دو ارب ،77 کروڑ ،44 لاکھ 44ہزار روپے ،غیر تنخواہ کی مد میں 18 کروڑ 43 لاکھ 68 ہزار روپے ۔پچھلے سال کا غیر صرف شدہ رقم 81 لاکھ ستر ہزار روپے ،کل وسائل 19 کروڑ 25 لاکھ 38 ہزار نو سو روپے ترقیاتی بجٹ سال 2016/17 کے لئے 32 کروڑ 36 لاکھ چھ ہزار روپے ضلع ٹیکس 3 کروڑ 94 لاکھ 47 ہزار روپے مختص کئے گئے ہیں ۔ضلع ناظم بونیر نے کہاکہ پچھلے ایک سال کے دوران صوبائی حکومت کی جانب سے کافی مشکلات کا سامنا کرنا پڑا ،بونیر کی ترقی اور خوشحالی کے لئے بونیر کی ضلعی حکومت ایک جامع منصوبہ رکھتی ہے ،ضلع کونسل بونیر کے معزز اراکین ترقیاتی فنڈز کو عوام کی امانت سمجھ کر خرچ کرے تاکہ ضلعی حکومت عوام کو زیادہ سے زیادہ سہولیات انکے دہلیز پر پہنچا سکیں ۔کنو نئیر یو سف علی کی زیر صدارت ہونے والے اجلاس سے اپنے خطاب میں اپوزیشن لیڈر حاجی صدیق اللہ نے محکمہ واٹر شید کمیٹی کی جانب سے پیش کردہ رپورٹ کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ ایوان کے جن معزز ممبران نے جو سوالات اٹھائے تھے ،رپورٹ میں اسکا ذکر تک نہیں ،انہوں نے کہا کہ گذشتہ پندرہ ماہ کے دوران اپوزیشن نے حکومت کے ساتھ ہر قسم کی تعاون کی ہے اور کرتے رہینگے مگر ان پندرہ ماہ کے دوران ضلع کونسل کے تمام اجلاسات گفتا ،نشستا اور برخاستا کے علاوہ کچھ نہیں ،ہماری آواز صدا بہ صحرا کے مصداق کے مترادف ہے ۔ضلع کونسل کے دائیرہ اختیار میں کو ئی بھی محکمہ ہمارے منظور شدہ قرار دادوں پر عمل نہیں کرتا ،ضلعی حکومت کے سربراہ نے بجٹ کی تیاری میں ہم سے کو ئی مشورہ تک نہیں کیا ،اگر یہی صورت حال برقرار رہی تو اپوزیشن لیڈر ڈسٹرکٹ مانیٹرنگ کمیٹی سے مستعفی ہوجائنگے ،انہوں نے محکمہ تعلیم اور محکمہ صحت کی کار کردگی پر کھلی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ یہ محکمے شتر بے مہار ہے ،صوبائی حکومت کے واضح پالیسی کے باوجود سیاسی بنیادوں پر تبادلے کئے جارہے ہیں اور ضلع کونسل کو بائی پاس کیا جارہاہے ،اجلاس سے ضلع کونسل کے دیگر اراکین گل محمد خان ،رشید خان ،سردار علی خان ،حجاب اللہ ،دراج خان ،وصال خان ،افسر خان ،انعام الرحمان ایڈوکیٹ ،اقبال خان ،ریاض خان ،ولی الرحمان خان ۔سید قائم شاہ ،روزی شاہ اور دیگر نے اپنے اپنے یو نین کونسل کے مسائل پیش کئے ۔کنو نئیر یو سف علی خان نے اجلاس پیر کے روز تک ملتوی کردی ۔پیر کے روزبجٹ پر بحث ہو گی ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...