وسیب کے حقوق کیلئے متحد، بہت جلد ریلیوں کاانعقاد کرینگے، ظہوردھریجہ

وسیب کے حقوق کیلئے متحد، بہت جلد ریلیوں کاانعقاد کرینگے، ظہوردھریجہ

ملتان (سٹی رپورٹر) وزیراعظم 14 اگست کے خطاب میں سرائیکی صوبے کے قیام کا اعلان کر کے سرائیکی وسیب کو آزادی کی خوشیوں میں شریک کریں ۔ ان خیالات کا اظہار سرائیکستان قومی کونسل کے صدر ظہور دھریجہ ،سرائیکی عوامی پارٹی کے سر براہ اکبر خان ملکانی ،پاکستان سرائیکی پارٹی کے(بقیہ نمبر35صفحہ11پر )

مرکزی رہنما ملک جاوید چنڑ اور پیپلزسرائیکی پارٹی کے صدر ملک ذوالنورین بھٹہ نے مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اُنہوں نے کہا کہ ہم وسیب کے حقوق کیلئے متحد ہیں اور بہت جلد مشترکہ ریلیوں کا انعقاد کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ آئین ساز ادارے سینیٹ سے دو تہائی اکثریت سے سرائیکی صوبے کا بل پاس ہو چکا ہے، پنجاب اسمبلی سے قرر داد ن لیگ نے خود پاس کرائی اور اپنی جماعت کے منشور میں لکھا کہ بر سر اقتدار آنے پرہم صوبہ بنائیں گے، سرائیکی رہنماؤں نے کہا میاں نواز شریف کو خدا نے موقع دیا ہے کہ وہ وفاق پاکستان کی مضبوطی کیلئے تاریخی کام کر جائیں، صوبہ بننے سے سنیٹ میں مائندگی ملے گی، چھوٹے صوبوں کا احساس محرومی ختم اور پنجاب کے خلاف نفرت کم ہوگی، سرائیکی وسیب کے کروڑوں لوگوں کو مراعات اور سہولتیں حاصل ہونگی۔ انہوں نے کہا امتیازی سلوک بند نہ ہوا اور سرائیکی صوبہ نہ دیا گیا تو 14 اگست کی خوشیاں نہیں منائیں گے۔ سرائیکی رہنماؤں نے کہا سرائیکی وسیب کے ارکان اسمبلی بے زبان گونگے بنے ہوئے ہیں ، ہمارا مطالبہ ہے کہ وہ اپنا حق نمائندگی ادا کریں جس طرح ن لیگ کے ممبر قومی اسمبلی اسد رمدے نے وزیراعظم کو کابینہ کے اجلاس میں منہ پر سیدھی سنا ئیں ، اسی طرح سرائیکی وسیب کے دوسرے ارکان اسمبلی بھی اس طرح کی جرأت کا مظاہر کریں اگر وہ ایسانہیں کرتے تو وہ استعفیٰ دیکر گھر آئیں،وسیب کے لوگ سیاہ جھنڈیوں سے ’’ بھرپور ‘‘ استقبال کریں گے اور گندے انڈوں سے خوب’’تواضع‘‘ کی جائے گی۔آخر میں گورنر پنجاب ملک رفیق رجوانہ سے مطالبہ کیا گیا کہ وہ زکریا یونیورسٹی میں سرائیکی ڈیپارٹمنٹ کے خلاف ہونیوالی سازشوں کا نوٹس لیں۔

ظہوردھریجہ

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...