اتوار بازار روں میں مہنگائی کا طوفان ، ریلیف نہ ملنے پر صارفین سراپا احتجاج

اتوار بازار روں میں مہنگائی کا طوفان ، ریلیف نہ ملنے پر صارفین سراپا احتجاج

لاہور(اپنے نمائندے سے) بڑی عید سے قبل مہنگائی کے سونامی نے سر اْٹھا لیا ہے۔ ابھی کتنی دور ہے عید قربان اٹھ چکا ہے مہنگائی کا طوفان ،سبزیوں کی قیمتوں میں ہوشر با اضافہ دیکھنے میں آ رہا ہے۔ اتوار بازار بھی ریلیف دینے میں ناکام دکھائی دیتے ہیں۔ ٹماٹر ایک روز میں 20 روپے مہنگا ہو کر 120 روپے فی کلوتک جا پہنچا اور ادرک 160روپے فی کلو میں بکنے لگا۔ مہنگائی کی شدت کے باعث صارفین کو مشکلات کا سامنا ہے۔ اتوار بازار شہریوں کو ریلیف فراہم کرنے میں ناکام ہو گیا۔نگران انتظامیہ اتوار بازار میں سبزیوں ، گوشت، پھلوں کے نرخ کم نہیں کرا سکی۔انتظامیہ کے دعوے دھرے کے دھرے رہ گئے۔ شادمان اور وحدت کالونی اتوار بازار میں نہ تو پینے کا پانی دستیاب ہے نہ ہی بیٹھنے کا کوئی انتظام ہے۔اتوار بازاروں میں بھنڈی 70، گھیاتوری 55، بیگن 65، پھول گوبھی، 70، گھیا کدو60، کریلے 55، بھنڈی 70، ٹینڈے دیسی 58، بیگن 55، لوکی 70، اروی 20آلو 25، پیاز45،لیموں120، ٹماٹر120،کھیرا 50، کریلے 65لہسن100، لہسن دیسی 85روپے فی کلو فروخت ہو رہے ہیں۔ سیب 120مکئی کے سٹے20کیلا درجن اول 80کیلا درجن دوئم 50میٹھا درجن85خوبانی 160آم سندھڑی100آم دوسیری 84آم انور راٹھور 110آم دیسی 50آم لنگڑا70 انار دیسی 180لیچی300کھجور ایرانی170گرما70 ناریل 160 انگور کالا 150آلو بخارہ130شکر گندی 55 ناشپاتی 84 چیکو 110پپیتا100 آڑو 120 امرود80،فی کلو فروخت کیا گیا۔اتوار بازار میں بڑا گوشت360روپے اور مرغی کا گوشت 177روپے زندہ ۔مہنگائی کے طوفان نے اتوار بازاروں کو بھی لپیٹ میں لے لیا، وحدت روڈ اتوار بازار میں بھی سبزیوں اور پھلوں کی قیمتوں میں ملا رجحان پایا گیا۔بڑھتی ہوئی قیمتوں کی وجہ سے شہری پریشان ہیں۔مہنگائی کی گاڑی بدستور چلتی جا رہی ہے اور غریب عوام پستی جا رہی ہے۔ لوگوں کا کہنا ہے کہ اب مہنگائی ہے تو کیا کریں جینے کے لئے اشیا خورونوش بھی ضروری ہیں۔ عوام کا کہنا ہے کہ کوئی جیے یا مرے نگران حکومت کو کچھ خیال نہیں۔ عوام کا مہنگائی پر رد عمل دیتے ہوئے کہنا تھا کہ کسی بھی بازار میں خریداری کیلئے جائیں تو ہر چیز مہنگی ہی مل رہی ہے

مزید : میٹروپولیٹن 1