ساتویں کلاس کی طالبہ سے5افراد کا گینگ ریپ،ویڈیو بناتے رہے،پولیس نے مقدمہ درج کر لیا

ساتویں کلاس کی طالبہ سے5افراد کا گینگ ریپ،ویڈیو بناتے رہے،پولیس نے مقدمہ درج ...
ساتویں کلاس کی طالبہ سے5افراد کا گینگ ریپ،ویڈیو بناتے رہے،پولیس نے مقدمہ درج کر لیا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

نئی دہلی(ڈیلی پاکستان آن لائن)یوپی کے ضلع بلیاکے ایک گاوں میں5افراد نے ساتویں کلاس کی طالبہ کو گھر کے قریب سے اغواءکر کے جنسی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا ہے پولیس نے مقدمہ درج کرلیا ہے۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق یوپی میں بلیا ضلع کے ایک گاوں میں ساتویں کلاس کی بچی کے ساتھ گینگ ریپ کا واقعہ سامنے آیا ہے۔ جہاں گاوں کے پانچ نوجوانوں نے پہلے بچی کے ساتھ گینگ ریپ کیا۔ اس دوران، ان کے ایک ساتھی نے اس واقعہ کا ویڈیو بنا لیا۔ نوجوان نے کسی کو بتانے کی صورت پر نابالغ بچی کو ویڈیو وائرل کرنے کی دھمکی دی تھی۔ واقعہ کی اطلاع اہل خانہ کو ملنے کے بعد وہ بچی کو پولیس اسٹیشن لے گئے جہاں پولیس نے واقعہ میں ملوث پانچ ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کر کے دو افراد کو گرفتار بھی کر لیا ہے۔ ساتھ ہی تین فرار ملزموں کی تلاش میں چھاپئے ماتے جارہے ہے۔ بچی کے مطابق یہ تمام نوجوان گزشتہ چار پانچ ماہ سے سکول سے آتے جاتے وقت اسے پریشان کرتے تھے۔ واقعہ کے دن جب وہ رفع حاجت کے لئے باہر جا رہی تھی، تبھی یہ تمام پانچوں ملزمان زبردستی اسے اٹھا کر جھونپڑی میں لے گئے، جہاں سبھی نے اس کے ساتھ گینگ ریپ کیا۔ اسی دوران ان کا ایک ساتھی پورے واقعہ کی ویڈیو بناتا رہا۔ اہل خانہ یا پولیس سے شکایت کرنے پر ملزمان ویڈیو وائرل کرنے کی دھمکی دے رہے تھے۔ساتویں کلاس کی بچی کی پانچ لوگوں نے کی عصمت دری، ویڈیو وائرل کرنے کی دے رہے تھے دھمکی وہیں، جب اس معاملہ کی جانکاری اہل خانہ کو ہوئی تو وہ نابالغ کو لے کر تھانہ پہنچے جہاں پولیس نے واقعہ میں ملوث پانچوں ملزمان کے خلاف معاملہ درج کرتے ہوئے دو کو گرفتار بھی کر لیا۔ بقیہ

مزید : جرم و انصاف