سپریم کورٹ نے فضائیہ ہاﺅسنگ سکیم متاثرین کو واجبات کی ادائیگی سے متعلق سندھ ہائیکورٹ کافیصلہ معطل کردیا

سپریم کورٹ نے فضائیہ ہاﺅسنگ سکیم متاثرین کو واجبات کی ادائیگی سے متعلق سندھ ...
سپریم کورٹ نے فضائیہ ہاﺅسنگ سکیم متاثرین کو واجبات کی ادائیگی سے متعلق سندھ ہائیکورٹ کافیصلہ معطل کردیا

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ کراچی رجسٹری نے فضائیہ ہاﺅسنگ سکیم متاثرین کو واجبات کی ادائیگی سے متعلق سندھ ہائیکورٹ کافیصلہ معطل کردیا،سپریم کورٹ نے ریمارکس دیتے ہوئے کہاکہ ایسے منصوبوں سے ہمارے اہم ادارے کانام بھی خراب کیاجا رہاہے، فضائیہ کسی پرائیویٹ ادارے کے ساتھ کیسے جوائنٹ وینچر کرسکتا ہے؟۔

نجی ٹی وی کے مطابق سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں فضائیہ ہاﺅسنگ سکیم سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی،سپریم کورٹ نے فضائیہ ہاﺅسنگ سکیم میں عوام سے دھوکہ دہی پر برہمی کااظہارکیا۔

جسٹس سجاد علی شاہ نے کہاکہ ایسے منصوبوں سے ہمارے اہم ادارے کانام بھی خراب کیاجارہاہے،سپریم کورٹ نے کہاکہ فضائیہ کسی پرائیویٹ ادارے کے ساتھ کیسے جوائنٹ وینچر کرسکتا ہے؟جسٹس سجاد علی شاہ نے کہاکہ منصوبے کیلئے زمین کیسے الاٹ کردی گئی؟،یہ صرف الاٹمنٹ کانہیں عوام کے ساتھ فراڈ کامعاملہ ہے ۔

سپریم کورٹ کراچی رجسٹری نے متاثرین کو واجبات کی ادائیگی سے متعلق سندھ ہائیکورٹ کافیصلہ معطل کردیا،عدالت نے نیب اور دیگر فریقین سے جواب طلب کرلیا۔

مزید :

قومی -علاقائی -سندھ -کراچی -