ڈیرہ، راجن پور میں سیلاب،نقصان کی ابتدائی رپورٹ تیار

ڈیرہ، راجن پور میں سیلاب،نقصان کی ابتدائی رپورٹ تیار

  

ڈیرہ غازیخان(سٹی رپورٹر)وزیر اعلیٰ چوہدری پرویز الٰہی کی ہدایت پر ڈیرہ غازیخان اور راجن پور اضلاع میں سیلاب زدگان کی بحالی کا عمل شروع کردیا گیا ہے کمشنر محمد عثمان انور نے بتایا کہ ڈی جی خان اور راجنپور کے سیلاب زدہ علاقوں میں 21 فلڈ ریلیف کیمپس قائم کئے گئے رود کوہیوں کے سیلاب زدگان میں ابتک 10112 خشک راشن اور 8835 خیمے تقسیم کردئیے گئے ہیں اور انہیں تین وقت کا تیار کھانا بھی دیا جارہا ہے سیلابی پانی سے 2703 افراد کو ریسکیو کیا (بقیہ نمبر3صفحہ6پر)

گیادونوں اضلاع میں 1242 بڑے اور 2687 چھوٹے مویشیوں کا علاج معالجہ کیا گیا20710 بڑے،54822 چھوٹے مویشی اور 37809 مرغیوں کی ویکسی نیشن کی گئی دونوں اضلاع میں محکمہ صحت نے 57 فکسڈ اور موبائل ٹیمیں بنائی گئیں کمشنر عثمان انور نے کہا کہ دونوں اضلاع میں سیلاب کے نقصانات کا سروے جلد شروع کرادیا جائے گا ڈی جی خان اور راجنپور اضلاع میں سیلاب کے نقصانات کی ابتدائی رپورٹ تیار کرلی گئی ہے تاہم حتمی نقصانات کا اندازہ سروے کے بعد ہوگا انہوں نے بتایا کہ ابتدائی رپورٹ کے مطابق دونوں اضلاع کے 265 مواضعات متاثر ہوئے10833 گھر کو جزوی اور مکمل نقصان پہنچا۔545090 ایکٹر رقبہ زیر آب آیا اور 194721 ایکڑ فصلیں متاثر ہوئیں۔انہوں نے بتایا کہ دونوں اضلاع میں 132181 افراد رود کوہیوں کے سیلاب سے متاثر ہوئے کمشنر محمد عثمان انور نے کہا کہ سیلاب متاثرین کی جلد بحالی کیلئے ہرممکن اقدامات کریں گے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -