تخت بھائی‘ مدے بابا میں خطرناک بھیڑیا کا بچے پر حملہ‘ عوام میں خوف 

 تخت بھائی‘ مدے بابا میں خطرناک بھیڑیا کا بچے پر حملہ‘ عوام میں خوف 

  

 تخت بھائی(نمائندہ خصوص)ایک طرف لوگ محمد جان کاکا کو ان کی بہادری پر داد دے رہے ہیں تو دوسری طرف چند دنوں میں خونی بھیڑیا کی تیسری بچے پر حملے سے لوگوں میں شدید خوف وہراس ہر طرف پھیلی ہوئی ہے۔ محمد جان کاکا کو کوئی نہیں جانتے ہونگے مگر آج اس نے جو کارنامہ سر انجام دیا ہے لوگ ساری عمر یاد رکھیں نگے۔آج اگر یہ سدیس بچہ زندہ ہے تو اللہ تعالی کی کرم سے اور محمد جان کاکا کی وجہ سے کیونکہ بھیڑیا نے جب بچے کو دبوچ لیا تو محمد جان کاکا کچھ فاصلے پر کھیتوں میں کام کررہے تھے جس نے  بچے کے چیخنے اور رونے کی آواز سن لی۔ بس ایک سکنڈ ضائع کئے بغیرمحمد جان کاکا نے دوڑ کر بھیڑیے سے لڑ کر اپنے آپ کو زخمی کرکے بھی بھیڑیا بگا دیا۔ اور سدیس کو بھیڑیا کے چنگل سے آزاد کرادیا۔ یاد رہے گزشتہ چند دنوں میں یہ  بھیڑیا تین بچوں پر حملہ آور ہوچکا ہے  جبکہ ایک بچی کو موت کے گھاٹ بھی اتار چکی ہے۔ علاقے کے لوگ اور تحریک نوجوانان مدیبابا نے محمد جان کے جرات اور حوصلے کو سراہا۔ اور ان کی علاج معالجے اور ویکسین کرانے کا انتظامیہ سے مطالبہ کر دیا ہے

مزید :

پشاورصفحہ آخر -