کارڈیک سنٹر بہاولپور،سی سی یو گیسٹرو انٹرالوجی کے حوالے،مسائل میں اضافہ

کارڈیک سنٹر بہاولپور،سی سی یو گیسٹرو انٹرالوجی کے حوالے،مسائل میں اضافہ

  

بہاولپور(ڈسٹرکٹ رپورٹر) کارڈیک سنٹر بہاولپوراربوں روپے کی لاگت سے تعمیر ہونیوالا مریضوں کیلئے وبال جان بن گیاکارڈیک سنٹرکی ایمرجنسی سی سی کوگیسٹروانٹرالوجی کے حوالے کردیا آدھی سی سی یوآدھی گیسٹروانٹرالوجی میں شامل کیاگیاہے جوکہ (بقیہ نمبر33صفحہ6پر)

ظالمانہ اقدام ہے جبکہ گیسٹروانٹرالوجی وارڈپہلے سے پرانی بلڈنگ کیساتھ موجود ہے امراض قلب کی سی سی یو گیسٹروانٹرایوجی کے حوالے کرنے کے بعددوبجے کے بعد امراض قلب کے ڈاکٹرغائب ہوجاتے ہیں جبکہ سی سی یوکاآدھاحصہ گیسٹروانٹرالوجی وارڈ بننے کے بعدبمشکل مریض وہاں پرداخل ہیں  وارڈ کے ڈاکٹروں نے غائب رہنا معمول بن لیاہے اوراپنے پرائیویٹ ہسپتالوں اورپرائیویٹ کلینکس پرپریکٹس کررہے ہیں سی سی یوختم کرنے کے بعدامراض قلب کے مریض خوار ہوتے رہتے ہیں پراناسی سی یو بحال کرنے کے باوجود وہاں پرنہ ہی پروفیسرڈاکٹر ہوتاہے اورنہ ہی کوئی سٹاف موجود ہے جونیئرسٹاف وہاں پرموجود ہونے کے باوجود ای سی جی کاطریقہ کاربہت مشکل کردیاگیاہے ای سی جی ہوجانے کے بعدچیک اپ کیلئے سینئرڈاکٹر وارڈ میں موجود نہیں ہوتے جبکہ کارڈیک سنٹر 100 بیڈپرمشتمل سنٹرہے دن کے بارہ بجے ڈاکٹراپنی ڈیوٹی پرآتے ہیں اورایک بجے کے قریب وارڈ سے غائب ہوجاتے ہیں کارڈیک سنٹر سی سی یوایمرجنسی اورکارڈیک سرجرجی میں تقریبا100 سے زیادہ ڈاکٹربھرتی کیے گئے تھے لیکن سی سی یوختم ہونے کے بعد انتظامیہ سمیت تمام ڈاکٹر ڈیوٹی سے غائب ہوجاتے ہیں اس سلسلہ میں شہریوں کی درخواست پرپرنسپل کیوایم سی نے انکوائری کرنے کاحکم دیاہے لیکن یہ انکوائری کاغذوں کی حدتک ختم ہوکررہ گئی ہے کارڈیک سنٹرمیں تعینات ہونیوالے انتظامی افسران سفارش کی بنیاد پر تعینات ہئے ہیں جوکارڈیک سنٹر کوتباہ کرنے اورویران کرنے پرپوری طرح تلے ہوئے ہیں۔ اس سلسلے میں شہریوں اورمتاثرین نے کمشنر آفس کے باہر احتجاج کیااور کارڈیک سنٹر کودوبارہ پرانی حالت میں لانے اور اورکارڈیک سنٹرکاآدھاحصہ گیسٹروانٹروالوجی سے واپس لینے اورفی الفور کارڈیک سنٹر کے تمام سنیئرڈاکٹروں کوڈیوٹی پرحاضری دینے کاپابندی کرنے کامطالبہ کیاہے۔ جبکہ ذرائع سے معلوم ہواہے کہ سابق ن لیگی ایم پی اے کی سفارش پرنااہل اورشعبہ میں امراض قلب کے بارے میں مہارت نہ رکھنے والے انتظامی افسران کوتعینات کیاہے جس سے کارڈیک سنٹربہاولپور تباہی کے دہانے پرپہنچ چکاہے۔شہریوں نے وزیراعلی پنجاب، چیف سیکرٹری ہیلتھ پنجاب اورکمشنربہاولپورسے فوری نوٹس لینے کامطالبہ کیاہے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -