کشمیر پر بھارتی تلسط اقوام متحدہ کے منہ پر طمانچہ ہے: فیصلہ امین گنڈا پور

    کشمیر پر بھارتی تلسط اقوام متحدہ کے منہ پر طمانچہ ہے: فیصلہ امین گنڈا پور

  

        پشاور (سٹاف رپورٹر) خیبر پختونخوا کے وزیر بلدیات و دیہی ترقی سردار فیصل امین گنڈاپور نے کہا ہے کہ کشمیر پر بھارتی تسلط اور بربریت اقوام متحدہ کے منہ پر طمانچہ ہے عالمی برادری اس ظلم و بربریت کا نوٹس لے اور اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق کشمیر میں استصواب رائے کرائے ورنہ مظلوموں کی آہوں اور سسکیوں کی تپش انکی دہلیز تک پہنچ کر یورپی اقتداروں کو بھسم کر سکتی ہے ڈیرہ اسماعیل خان میں یوم استحصال کشمیر پر تقریب سے خطاب کرتے ہوئے فیصل امین گنڈاپور کا کہنا تھا کہ اگرجبر کے شکار کشمیری عوام کو انصاف نہیں مل سکتا تو پھر اقوام متحدہ کا جواز بھی ختم ہو جاتا ہے ایسے عالمی اداروں کے انصاف پر دنیا بھر کے عوام کا اعتماد بھی بحال نہیں ہو سکتا سردار فیصل امین نے کہا کہ بھارتی درندگی پر عالمی برادری کی مجرمانہ خاموشی نے بھارت کو اتنا دلیر بنا دیا ہے کہ گزشتہ پانچ اگست کو اس نے کشمیر کی خصوصی حیثیت ہی ختم کر دی اور کشمیریوں پر مظالم میں اضافہ کر دیا انہوں نے خبردار کیا کہ نہتے کشمیریوں بالخصوص نوجوانوں کی نسل کشی بند نہ کی گئی اور انہیں خاک و خون میں نہلانے کا عمل جاری رکھا گیا تو دنیا میں مظلوم اقوام کی طرف سے اقوام متحدہ اور دیگر عالمی اداروں کی مالی و اخلاقی امداد بند کرنے کی مہم بھی شروع ہو سکتی ہے اسلئے عالمی برادری نوشتہ دیوار پڑھ لے اور کشمیر سے متعلق قراردادوں پر عملدرآمد یقینی بنائے۔

مزید :

صفحہ اول -