دولہا نے مہمانوں  کے سامنے ہی دلہن کو پیٹ پیٹ کر موت کے گھاٹ اتار دیا

دولہا نے مہمانوں  کے سامنے ہی دلہن کو پیٹ پیٹ کر موت کے گھاٹ اتار دیا
دولہا نے مہمانوں  کے سامنے ہی دلہن کو پیٹ پیٹ کر موت کے گھاٹ اتار دیا

  

ماسکو (ڈیلی پاکستان آن لائن) روس سے تعلق رکھنے والے ایک دولہا نے شادی کی تقریب میں مہمانوں  کے سامنے ہی دلہن کو پیٹ پیٹ کر قتل کردیا۔ مجرم نے عدالت کو بتایا کہ اسے لگا کہ اس کی ہونے والی بیوی اس کے ساتھ بے وفائی کر رہی ہے۔

ڈیلی سٹار کے مطابق 35 سالہ سٹیفن ڈولگیخ  پہلے ہی قتل کے ایک مقدمے میں سزا کاٹ رہا تھا جہاں اس کا تعارف 36 سالہ اوکسانا پولودینتساوا سے ہوا۔ ایک عینی شاہد کے مطابق شادی کی تقریب کے دوران اوکسانا کو ایک مہمان کے ساتھ خوش گپیوں  میں مصروف دیکھ کر سٹیفن جلن کا شکار ہوا اور اسے خود پر قابو رکھنے کا کہنے لگا۔

چیف انویسٹی گیٹر کے مطابق شادی کے چند گھنٹوں بعد ہی سٹیفن نے اوکسانا کو گھر کے باہر گھونسوں اور لاتوں سے مارنا شروع کردیا،  اس نے اپنی نئی نویلی دلہن کو تشدد کرکے قتل کیا اور اس کی لاش قریب ہی پھینک دی۔  جس وقت ظالم شوہر کی طرف سے یہ واردات کی جا رہی تھی اس وقت مہمان بھی موجود تھے لیکن تمام مہمان ہی اتنے زیادہ خوفزدہ ہوگئے تھے کہ ان میں سے کسی کو بھی آگے بڑھ کر جھگڑا رکوانے کی ہمت نہیں پڑی۔

ملزم کو نیشنل گارڈ نے موقع سے ہی گرفتار کرلیا، اس نے اپنے بیان میں اعترافِ جرم بھی کرلیا ۔ عدالت کی جانب سے اسے 18 برس قید کی سزاسنائی گئی ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -