پاکپتن بجلی گھر: احسن اقدام

پاکپتن بجلی گھر: احسن اقدام

  

وزیراعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف نے پیر کو پاکپتن پن بجلی کے ایک منصوبے کا سنگ بنیاد رکھا یہ پنجاب میں اپنی نوعیت کا پہلامنصوبہ ہے ۔ یہ بجلی اپنے ذرائع سے ملے گی اور سستی ہو گی کہ سب سے زیادہ کم قیمت پن بجلی ہوتی ہے۔ وزیراعلیٰ پنجاب نے اِس موقعہ پر کہا کہ یہ کام بہت پہلے ہونا چاہئے تھا ان کے پیش رو حضرات نے کچھ نہیں کیا۔

پاکستان میں توانائی کا بحران ہے، گیس کی بھی لوڈشیڈنگ ہو رہی ہے، اس لئے اگر صوبے اس طرف متوجہ ہوتے ہیں تو یہ احسن اقدام ہو گا۔ پاکپتن کا بجلی گھر مقررہ وقت میں مکمل ہونا چاہئے اور یہ آخری نہیں پہلا منصوبہ ہی ہو۔ اس کے بعد مزید بجلی گھر بھی تعمیر کئے جائیں۔ اس سلسلے میں ہماری ایک تجویز ہے کہ شمسی توانائی کا استعمال بھی شروع کیا جائے، حکومت پنجاب اپنی سطح پر کسی ایسے ملک کی معروف اور اچھی کمپنی کو دعوت دے ، جو عیوب سے پاک شمسی توانائی فراہم کرے۔ اس کمپنی سے پہلے صوبائی حکومت سرکاری ضروریات پوری کرے اور پھر اسے عام شہریوں کے لئے بھی فروخت کرنے کی اجازت دی جائے۔ یہ جلد کمی پوری کرنے والا نظام ہے اور پھرشمسی توانائی کے ساتھ یہ مسئلہ بھی نہیں ہوگا کہ پانی کی کمی کے ساتھ پن بجلی کی پیداوار بھی کم ہو جاتی ہے۔ ہمیں یقین ہے کہ وزیراعلیٰ شہباز شریف ادھر بھی توجہ فرمائیں گے۔  ٭

مزید :

اداریہ -