کراچی میں جاری ٹارگٹ کلنگ کے واقعات میں ایک ہی گروہ کے ملوث ہونے کا انکشاف

کراچی میں جاری ٹارگٹ کلنگ کے واقعات میں ایک ہی گروہ کے ملوث ہونے کا انکشاف
کراچی میں جاری ٹارگٹ کلنگ کے واقعات میں ایک ہی گروہ کے ملوث ہونے کا انکشاف

  

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) کراچی میں ایک طویل عرصے سے جاری ٹارگٹ کلنگ میں ایک ہی گروپ کے ملوث ہونے کا انکشاف ہواہے جس کے بعد تفتیش کا دائرہ کار مخصوص اسلحہ ڈیلر اور ٹارگٹ کلر تک محدود کردیاگیاہے ۔ پولیس کے فرانزک یونٹ نے شہرقائد کے مختلف علاقوں میں ٹارگٹ کلنگ کے لیے استعمال ہونے والے اسلحے پر رپورٹ مرتب کر لی جس کے مطابق سچل ، قائد آباد اور شاہ لطیف میںچھ سیاسی کارکنان اور میاں بیوی کے قتل کے حالیہ واقعات میں ایک ہی کمپنی کی گولیاں استعمال کی گئی ہیں اور تمام وارداتوں میں نائن ایم ایم اور 30 بور کے دو ہی پستول استعمال ہوئے۔ذرائع کے مطابق رپورٹ کے بعد تفتیشی اداروں نے اپنی تفتیش سے تحریک طالبان کی کارروائیاں کا عنصر خارج کردیاہے اور اب تفتیش کا دائرہ محدود کردیاگیا۔نجی چینل کے مطابق رپورٹ گولیوں کے 34 خالی خولوں کے تجزئیے کے بعد تیار کی گئی ۔

مزید :

کراچی -