میو ہسپتال کے سرجیکل ٹاور کی تعمیر11سال بعد بھی نامکمل

میو ہسپتال کے سرجیکل ٹاور کی تعمیر11سال بعد بھی نامکمل

لاہور(جنرل رپورٹر)میو ہسپتال کے سرجیکل ٹاور کی تعمیر11سال بعد بھی مکمل نہ ہو سکی محکمہ صحت اور سی اینڈ ڈبلیوٹاور کی تاخیر کے باعث لاگت 54کروڑ سے بڑھ کر 3ارب57کروڑ تک پہنچ گئی ہے۔سرجیکل ٹاور کی تعمیر کا سنگ بنیاد سابق وزیر اعلیٰ پنجاب چوہدری پرویز الٰہی نے2004میں رکھا تھا۔اس عمارت کی تعمیر کا تخمینہ 54کروڑ روپے لگایا گیا تھامگر محکمہ صحت اورسی اینڈ ڈبلیو کی طرف سے عمارت کی تعمیر بروقت کرنے میں ناکام رہے اور اب اس کی لاگت ساڑھے تین ارب سے تجاوز کر گئی ہے۔مذکورہ محکموں کی مجرمانہ غفلت سے ایک طرف ٹاور مکمل نہ ہونے سے سرجیکل کے شعبہ جہاں منتقل نہ ہونے سے ہسپتال کے مسائل میں اضافہ ہو گیاہے دوسری طرف حکومتی خزانے پر اربوں کا اضافی بوجھ بھی پڑ رہا ہے۔

مزید : علاقائی