جامع مسجد بحریہ ٹاؤن میں نماز جمعہ کی ادائیگی،لاکھوں افراد کی شرکت

جامع مسجد بحریہ ٹاؤن میں نماز جمعہ کی ادائیگی،لاکھوں افراد کی شرکت

 لاہور(سٹاف رپورٹر)دنیا کی ساتویں بڑی جامع مسجد بحریہ ٹاؤن لاہور میں لاکھوں نمازیوں نے رویت ہلال کمیٹی کے چیئرمین مفتی منیب الرحمن کی امامت میں نمازِ جمعہ ادا کی۔ نماز جمعہ کے بڑے اجتماع میں تلاوت و نعت کے چانسلر الفرقان اکیڈمی مفتی محمد اکمل عطا نے خصوصی خطاب کیا جبکہ نماز جمعہ کے اختتام پر سیلانی ویلفیئر ٹرسٹ کے سرپرستِ اعلیٰ ممتاز روحانی شخصیت علامہ محمد بشیر فاروقی نے رقت انگیز دعا کروائی اور شرکائے اجتماع سے گناہوں سے اجتناب کا حلف لیا۔ دعا کے دوران اجتماع میں شریک خواتین اور مرد ہچکیوں اور آنسوؤں کے ساتھ زار و قطار روتے رہے۔ اس موقع پر اجتماعی توبہ بھی کی گئی۔ گرینڈ جامع مسجد بحریہ ٹاؤن میں کم و بیش ساڑھے تین لاکھ نمازیوں کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے مفتی منیب الرحمن نے کہا کہ اسلام میں انتہا پسندی اور دہشت گردی کی کوئی گنجائش نہیں۔ اسلام امن، محبت، رواداری اور حسن اخلاق کا درس دیتا ہے۔ مسلمان دنیا و آخرت میں کامیابی کے لئے قرآن اور صاحب قرآن سے اپنا تعلق مضبوط بنائیں۔ پاکستان کی ترقی، خوشحالی اور بقا نظام مصطفےٰ سے وابستہ ہے۔ شدت پسندی کے خاتمے کے لئے صوفیا کی تعلیمات کو اپنانے اور پھیلانے کی ضرورت ہے۔ نیکی کا راستہ ہی فلاح و نجات کا راستہ ہے۔ مسلمان عشقِ رسول صلی اللہ علیہ والہ وسلم کے حسین راستوں کے مسافر بنیں۔ مفتی منیب الرحمن نے مزید کہا کہ لسانی، علاقائی اور فرقہ وارانہ تعصبات نے پاکستان کو کمزور کیا ہے۔ اس لئے پاکستانیت کے جذبوں کو عام کرنے کی ضرورت ہے۔ محب وطن طبقات استحکام پاکستان کے لئے متحد ہو جائیں۔ اسلام دشمن سازشوں کا راستہ روکنے کے لئے اُمت مسلمہ کا پائیدار اتحاد ضروری ہے۔ مسلمان باہمی لڑائیاں چھوڑ کر عالم کفر کے مقابلہ کے لےء متحد ہو جائیں۔ وحدتِ امت وقت کی اہم ضرورت ہے۔ رویت ہلال کمیٹی کے چیئرمین نے کہا کہ علماء و مشائخ پر تشدد رویوں کی اصلاح کے لئے اپنا کردار ادا کریں۔ عدم برداشت کے بڑھتے رحجان نے معاشرے کو آتش فشاں بنا دیا ہے۔ محبت رسولؐ اطاعت رسول صلی اللہ علیہ والہ وسلم کا راستہ دکھاتی ہے۔ پیروی رسول صلی اللہ علیہ والہ وسلم کے بغیر عشق رسولؐ کا دعویٰ بے معنی ہے۔ مسلم حکمران سیرت رسول صلی اللہ علیہ والہ وسلم سے راہنمائی حاصل کریں اور قرآن مجید کو اپنا آئین بنالیں۔گرینڈ جامع مسجد بحریہ ٹاؤن میں جمعہ کے بڑے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے مفتی محمد اکمل عطا نے کہا کہ مسلمان اللہ کے قرآن اور رسول اللہ صلی اللہ علیہ والہ وسلم کے فرمان کو اپنائیں۔ اطلاعت الٰہی اور حب رسول صلی اللہ علیہ والہ وسلم ہی سکون و اطمینان کا بہترین ذریعہ ہیں۔ مسلم نوجوان بے مقصدیت اور بے راہرری کو چھوڑ کر قرآن ہدایات اور اسلامی احکامات کی پابندی کریں۔ عہد حاضر کا ظاہر پرست انسان اندر سے ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہے۔ انتہا پسندی کے خاتمے کے لئے نفرتوں کو مٹانے اور محبتوں کو بڑھانے کی ضرورت ہے۔ مسلمان جھوٹ، خیانت، غیبت، چغل خوری، کینہ پروری کو ترک کردیں۔ ہر کلمہ گو مسلمان اپنے اللہ اور رسول اللہ صلی اللہ علیہ والہ وسلم کی خوشنودی حاصل کرنے کی تڑپ پیدا کرے۔ مسلم نوجوان منشیات کا استعمال چھوڑ دیں، مسلم خواتین پردے کو اپنا شعار بنائیں۔ نظام مصطفےٰ صلی اللہ علیہ والہ وسلم ہی ہر دکھ کی دوا اور ہر مسئلے کا حل ہے۔ اُمت مسلمہ ترقی اور عروج کے لئے علم اور عمل کا راستہ اختیار کرے۔ امت محمدیہ اتحاد کے ذریعے ہی عظمت رفتہ بحال کرسکتی ہے۔ قرآن ہی نسخہ کیمیا ہے۔ قرآنی تعلیمات پر عمل کرنے والا کبھی ناکام نہیں ہوسکتا۔ پاکستان کو بحرانوں اور قوم کو مایوسی سے نکالنے کے لئے شریعت اسلامیہ کو اپنانے کی ضرورت ہے۔جمعہ کی نماز میں کثیر تعداد میں علماء کرام ومشائخ عظام جن میں شیخ الحدیث عبدالستار سعیدی ،علامہ خادم حسین رضوی ،محمد ضیاء الحق نقشبندی ،الشاء اویس نورانی ،صاحبزادہ محمد نصیر ہزاروی اور دیگر موجود تھے ۔

مزید : صفحہ آخر