ملک بھر میں شاہراہوں اور موٹر ویزکے لیے نیا ٹول پلان جاری

ملک بھر میں شاہراہوں اور موٹر ویزکے لیے نیا ٹول پلان جاری

اسلام آباد (ویب ڈیسک) نیشنل ہائی وے اتھارٹی نے ملک بھر میں قومی شاہراہوں اور موٹر ویز پر چلنے والی ٹرانسپورٹ کیلئے نیا ٹول ٹیکس پلان جاری کیا ہے۔نئے ٹول ٹیکس کے مطابق قومی ہائی ویز پر کار سے30، ویگن سے 40، بسوں سے90،ٹو اور تھری ایکسل ٹرک سے110، بڑے ٹرالوںسے دو سو بیس، اسی طرح کوہاٹ ٹنل پر کار سے 60، ویگن سے 210، بسوں سے260، دو اور تھری ایکسل ٹرک سے260اور بڑے ٹرالوں سے390روپے وصول کئے جائیں گے۔ ایم ون پر کار سے دو سو، ویگن بارہ سیٹر سے تین سو تیس، کوسٹرو منی بس چار سو ساٹھ، بسوں سے چھ سو ساٹھ، دو اور تھری ایکسل ٹرک سے آٹھ سو ساٹھ اور بڑے ٹرالوں سے ایک ہزار پچاس، سال دو ہزار پندرہ ، سولہ کیلئے کار سے دو سو تیس، ویگن سے تین سو نوے، کوسٹرو منی بس سے پانچ سو چالیس، بسوں سے سات سو ستر، دو اور تین ایکسل ٹرک سے ایک ہزار اور بڑے ٹرالوں سے بارہ سو تیس، سال دو ہزار سولہ سترہ کیلئے کار سے دو سو ساٹھ، ویگن سے چار سو پچاس، کوسٹرو منی بس سے چھ سو بیس، بسوں سے آٹھ سو اسی، دو اور تین ایکسل ٹرک سے گیارہ سو چالیس اور بڑے ٹرالوں سے دو ہزار تین سو تیس، سال دو ہزار پندرہ سولہ کیلئے کار سے پانچ سو دس، ویگن سے ا ٓٹھ سو پچاس، کوسٹرو منی بس سے گیارہ سو نوے، بسوں سے سترہ سو، دو اور تین ایکسل ٹرکوں سے بائیس سو دس اور بڑے ٹرالوں سے ستائیس سو بیس، سال دو ہزار سولہ سترہ کیلئے کار سے پانچ سو نوے، ویگن سے نو سو ستر، کوسٹرو منی بس سے تیرہ سو ساٹھ، بسوں سے انیس سو چالیس، دو اور تین ایکسل ٹرکوں سے پچیس سو تیس اور بڑے ٹرالوں سے اکتیس سو دس روپے وصول کئے جائیں گے۔ ایم تھری پر کار سے اسی، ویگن سے ایک سو بیس، کوسٹرو منی بس سے ایک سو ستر، بسوں سے دو سو چالیس، دو اور تین ایکسل ٹرکوں سے تین سو بیس اور بڑے ٹرالوں سے تین سو نوے، سال دو ہزار پندرہ سولہ کیلئے کار سے نوے، ویگن سے ایک سو چالیس، کوسٹرو منی بس سے دو سو، بسوں سے دو سو اسی، دو اور تین ایکسل ٹرکوں سے تین سو ستر اور بڑے ٹرالوں سے چار سو ساٹھ، سال دو ہزار سولہ سترہ کیلئے کار سے ایک سو، ویگن سے ایک سو ساٹھ، کوسٹرو منی بس سے دو سو تیس، بسوں سے تین سو بیس، دو اور تین ایکسل ٹرکوں سے چار سو بیس اور بڑے ٹرالوں سے پانچ سو تیس روپے وصول کئے جائیں گے۔ ذرائع کے مطابق شاہراہوں کے بارہ ہزار کلومیٹر حصے کی تعمیر و مرمت کیلئے حکومت سے ایک پائی بھی حاصل نہیں کی جاتی، تعمیر و مرمت کیلئے ٹول پلازوں کی آمدن سے ہی کی جاتی ہے۔ آخری بار دو ہزار گیارہ میں ٹول کیلئے شرح کا اعلان کیا گیا ہے۔ قواعد کے مطابق ہائی وے اتھارٹی پینتس کلومیٹر سے پینسٹھ کلومیٹر کے مابین ٹول پلازہ قائم کیا جا سکتا ہے۔

مزید : قومی

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...