مولانا طارق جمیل کو سمپوزیم میں دیکھ کرتکلیف ہوئی ، مسلمانوں کی آباد ی کرنا صیہونی ایجنڈاہے :اوریا مقبول جان

مولانا طارق جمیل کو سمپوزیم میں دیکھ کرتکلیف ہوئی ، مسلمانوں کی آباد ی کرنا ...
مولانا طارق جمیل کو سمپوزیم میں دیکھ کرتکلیف ہوئی ، مسلمانوں کی آباد ی کرنا صیہونی ایجنڈاہے :اوریا مقبول جان

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) معروف دانشور اوریا مقبول جان نے کہاہے کہ مسلمانوں کی آبادی کم کرنا صیہونی ایجنڈا ، ریاست کو بچے کم کرنے کیلئے ایجنڈا بنانے کا کوئی حق نہیں ہے،مولاناطارق جمیل کو سمپوزیم میں دیکھ کر تکلیف ہوئی ۔

نجی ٹی وی چینل ’’نیونیوز‘‘ کے پروگرام ”حرف راز“ میں گفتگو کرتے ہوئے اوریا مقبول جان نے کہا کہ ریاست کوبچے کم کرنے کیلئے ایجنڈا بنانے کا کوئی حق نہیں ہے،ایک بندہ انفرادی طور پر تواپنے بچوں کی تعداد کے حوالے سے فیصلہ کرسکتاہے،مجھے مولانا طارق جمیل کو آبادی کے حوالے سے سمپوزیم میں دیکھ کر بڑی تکلیف ہوئی ہے،کوئی بھی جو اپنی اولاد کورحم مادر میں آنے سے منع کرے یا کسی اور طریقے سے روکے اس نے اللہ کی رحمت کوچیلنج کیاہے ۔

انہوں نے کہا کہ بچہ کو  پیدا کرنے والی اللہ تعالیٰ کی ذات ہے،کیا اللہ کو اتنا بھی نہیں پتہ کہ میں نے ایک بچے کو دنیا میں بھیجاہے اور اس کی روزی کا بندوبست کیا ہوگا؟۔ انہوں نے کہا کہ مسلمانوں کی آباد ی کوکم کرنا صیہونی ایجنڈا ہے، اس حوالے سے سی آئی اے کی متعدد رپورٹس میں دنیا میں مسلمانوں کی آبادیوں کوکنٹرول کرنے سے متعلق تجاویز پیش کی گئی ہیں،بر طانیہ کے تھنک ٹینکس نے یہ ریسرچ کی ہے کہ اسلامی تاریخ میں امام مہدی کا ذکر ملتاہے اور اگر کل کو امام مہدی کے پرچم تلے ساری دنیا کہ مسلمان اکٹھے ہوگئے تو یہ بہت بڑا خطرہ بن سکتے ہیں۔

مزید :

قومی -