فیملی فزیشن کی سروسز ہسپتال میں خاتون کے ڈاکٹر پر بد اخلاقی کے الزام کی مذمت

فیملی فزیشن کی سروسز ہسپتال میں خاتون کے ڈاکٹر پر بد اخلاقی کے الزام کی مذمت

  

لاہور(جنرل رپورٹر)پاکستان اکیڈمی آف فیملی فزیشنزکے رہنماؤں ڈاکٹر طارق محمود میاں ڈاکٹر سعید اختر اور ڈاکٹر طاہر چودھری نے کہا ہے کہ فیملی فزیشن سروسز ہسپتال میں ہونے والے واقعے اور خاتون کے ڈاکٹر پر زیادتی کے بے بنیاد الزام پرزور مذمت کرتی ہے۔انہوں نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مزیدکہا کہ فورینزک رپورٹ کے آنے کے بعد خاتون کا یہ الزام جھوٹا اور بے بنیاد ثابت ہوا ہے، ہم اعلیٰ حکام خاص طور پر وزیر صحت محترمہ پروفیسر یاسمین راشد سے التماس کرتے ہیں کہ اس واقعے کی مکمل تحقیقات کروائیں اور اس خاتون اور اس کے پیچھے جو جو لوگ بھی ملوث ہیں اور پولیس جس نے بغیر تحقیقات کے ڈاکٹر کے خلاف ایف آر کاٹی ان سب کے خلاف سخت ایکشن لیں اور ذمہ دار اور سازشی افراد کو قرار واقعی سزا دی جائے۔

،ہماری میڈیا سے درخواست ہے کہ آئندہ کسی بھی واقعے کی خبر دینے سے پہلے اس کی مکمل تصدیق کر لیں تاکہ پاکستان کا یہ معتبر طبقہ مزید کسی پریشانی سے بچ سکے ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -