کوآپرٹیو سوسائٹیوں پر فی ٹیوب ویل 3لاکھ تک ٹیکس نافذ کردیا گیا

کوآپرٹیو سوسائٹیوں پر فی ٹیوب ویل 3لاکھ تک ٹیکس نافذ کردیا گیا

  

لاہور(اپنے نمائندے سے )ایل ڈی اے واسا نے کوآپرٹیو سوسائٹیوں میں فی ٹیوب ویل پانی استعمال کئے جانے پر 2سے 3لاکھ روپے کا ٹیکس سوسائٹی انتظامیہ پر نافذ کر دیا ۔ایسوسی ایشن آف کوآپرٹیو سوسائٹیز پنجاب کے صدر ملک شہباز لاہور ڈویژن کے صدر ملک اشرف ڈوگری اور جنرل سیکریٹری کیپٹن(ر) ایم اے فاروقی نے اس اقدام کو غیر قانونی قرار دیدیا روزنامہ پاکستان کو ملنے والی معلومات کے مطابق ایل ڈی اے واسا کی جانب سے صوبائی دارالحکومت میں 272سے زائد آنیوالی کوآپرٹیو ہاؤسنگ سوسائٹیوں کو نوٹسز جاری کرنے پر سوسائٹی میں نصب ٹیوب ویل پر 2لاکھ سے 3لاکھ روپے ٹیکس نافذ کر دیا ہے جن سوسائٹیوں میں 5ٹیوب ویل ہوں گے وہ 10لاکھ سے 15لاکھ روپے اداکرینگی۔ دوسری جانب ایسوسی ایشن آف کوآپرٹیو پنجاب کے صدر ملک شہباز کھوکھر لاہور ڈویژن کے صدر ملک اشرف ڈوگر اور ایم اے فاروقی نے ایل ڈی اے واسا کے اقدام کو غیر قانونی قرار دیتے ہوئے ہنگامی اجلاس طلب کر لیا ہے۔ اجلاس میں ماڈل ٹاؤن سوسائٹی ،پی آئی اے ، ٹی این ٹی ، این ایف سی، پی سی ایس آئی آر، (سٹاف) ، اقبال ریونیو ، پبلک ہیلتھ سمیت متعلقہ کوآپرٹیو سوسائٹیز کے صدر اور جنرل سیکریٹریز نے شرکت کی۔ اجلاس میں متفقہ طور پر ایل ڈی اے واسا کے اس اقدام کو اعلیٰ عدالتوں میں چینلج کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔

ایسوسی ایشن آف کوآپرٹیو کے صدر ملک شہباز کھوکھر، لاہور ڈویژن کے صدر ملک اشرف ڈوگر اور جنرل سیکرٹری کیپٹن(ر) ایم اے فاروقی کا کہنا تھا کہ یہ سراسر زیادتی اور نا انصافی کے مترادف ہے ہم قبل ازیں جس ٹیوب ویل کے استعمال کا ماہانہ 7 ہزار سے آٹھ ہزار روپے بل دیتے تھے اب 2لاکھ سے 3لاکھ روپے کہاں سے ادا کریں گے کوآپرٹیو سوسائٹی تو اپنی مدد آپ کے تحت انتظامیہ کو دیکھتی ہے کوئی کاروباری ادارہ نہ ہے ہم پرامید ہیں کہ اعلیٰ عدالت سے ہمیں انصاف ملے گا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -