مدارس سے چھیڑ چھاڑ بند کی جائے ‘ مولانا عبدالرحمن جامی

مدارس سے چھیڑ چھاڑ بند کی جائے ‘ مولانا عبدالرحمن جامی

بٹہ کوٹ(نمائندہ پاکستان)دہشت گردی کا تعلق مدارس سے جوڑنا درست نہ ہے ۔، مدارس سے’’ چھیڑ چھاڑ ‘‘بند کی جائے،دینی (بقیہ نمبر22صفحہ12پر )

مدارس دہشت گردی کے خاتمے میں حکو متی حلیف ثابت ہوئے ہیں، دینی مدارس نے ملکی سلامتی میں ہمیشہ اہم کردار ادا کیا ہے ،حکمرانوں کو دینی مدار س کے خلاف مہم جوئی ترک کرنا ہو گی،ان خیالا ت کا اظہار جمعیت علمائے اسلام کی مرکزی شوریٰ کے رکن،صوبائی سیکرٹری اطلاعات پنجاب مولانا عبدالرحمن جامی نے گزشتہ روز اپنے دفتر میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ دینی مدارس میں حکو متی مداخلت کا مقصد غیر ملکی قوتوں کے اشاروں پر سیکولر نصاب نافذ کرتے مدارس کے اسلامی تشخص کو مسخ کرنا ہے انہوں نے کہا کہ دینی مدارس نے ہمیشہ کڑے وقت میں ملکی سلامتی اور علاقائی قیام امن میں نمایاں اور فعال کردار اداکیا ہے حکو مت کو ئی بھی فیصلہ کر نے سے قبل مدارس کی نمائندہ تنظیموں سے مشاورت کرے تاکہ تمام معاملا ت افہام و تفہیم سے طے پاسکیں انہوں نے کہا کہ غیر ملکی قوتیں ہمیشہ سے دینی مدارس کو اپنا ہدف بنائے بیٹھی ہیں مگر مدراس کے خلاف کوئی سازش کامیاب نہیں ہوسکے گی مدارس کے تحفظ کے لئے قوم ہر قربانی دینے کے لئے تیار بیٹھی ہے۔

مدارس

مزید : ملتان صفحہ آخر