پرسکون ماحول میں خواتین معیشت بہتری میں کلیدی کردارادا کرسکتی ہیں ، تیمورسلیم جھگڑا

پرسکون ماحول میں خواتین معیشت بہتری میں کلیدی کردارادا کرسکتی ہیں ، ...

  

پشاور( سٹاف رپورٹر)اکتیس خواتین ٹیموں کو تیس ماہ کیلئے آئی ٹی کی مدمیں ملٹی ڈونر فنڈ سے دو ملین ڈالر کی مدد فراہم کی جارہی ہے، یہ خواتین ٹیمیں دیگر خواتین کیلئے رول ماڈل ہونگیں اور روزگار کے مواقع فراہم کرینگیں، خواتین آئی ٹی فیلڈ میں نام کماسکتی ہیں، خواتین کسی بھی طرح مردوں سے پیچھے نہیں، تیمور سلیم جھگڑہ کا کے پی آئی ٹی بورڈ کے زیر انتظام درشل سنٹر پشاور میں منعقدہ تقریب سے خطاب۔ وزیرخزانہ تیمور سلیم خان جھگڑہ نے کے پی آئی ٹی بورڈ کے زیر انتظام درشل سنٹر پشاور میں منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ خواتین ہماری آبادی کا آدھا حصہ ہیں اور اگر ان کو مناسب مواقع فراہم کئے جائیں تو صوبے کی معیشت میں بہتری لائی جاسکتی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ درشل جیسے اداروں کی پورے صوبے میں ضرورت ہے اور خواتین کیلئے آرام دہ اور پرسکون ماحول پر مبنی ادارے خواتین کو معیشت بہتر بنانے میں کلیدی کردار اداکرسکتے ہیں۔ تقریب کے دوران وزیرخزانہ کی آئی ٹی فیلڈ میں کام کرنے والی اکتیس خواتین ٹیموں سے گفتگو بھی ہوئی جنھیں ملٹی ڈونر فنڈ سے دو ملین ڈالر مدد فراہم کی جارہی ہے جس سے نہ صرف ان خواتین کو روزگار کے مواقع ملیں گے بلکہ دیگر خواتین کیلئے بھی ان کے پاس روزگار کے مواقع میسر آئینگے۔ ان ٹیموں میں ہر ٹیم میں تین خواتین شامل ہیں جن کی کل تعداد ترانوے بنتی ہے۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر خزانہ نے ڈونرز کا شکریہ ادا کیا اور خواتین کو روزگار کے مزید مواقع فراہم کرنے کیلئے درشل ادارے کے کام کو سراہا۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ خواتین کو باصلاحیت اور باختیار بناکر ہی ہم ایک صحت مند معاشرہ تشکیل دے سکتے ہیں جہاں خواتین مردوں کے شانہ بشانہ چل کر مختلف شعبہ ہائے زندگی میں نام کماسکتی ہیں۔ وزیرخزانہ کا مزید کہنا تھا کہ صوبے میں خواتین سرمایہ کاروں کو راغب کرنے کیلئے انتہائی آسان بزنس پالیسی ترتیب دی گئی ہے اور حکومت اس مد میں آسانیاں پیداکرنے میں انتہائی مخلص ہے۔ ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ گھر کے اندر سے لیکر قومی معیشت تک کا دارومدار خواتین پر ہے اور انہیں اس مد میں اپنے کردار کی اہمیت سے باخبر ہونا چاہئیے۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -