پسماندہ علاقوں کے طلبا کو کمپوٹر کی تعلیم دینا صوبائی حکومت کی ترجیح ہے: سید نور علی شاہ

پسماندہ علاقوں کے طلبا کو کمپوٹر کی تعلیم دینا صوبائی حکومت کی ترجیح ہے: سید ...
پسماندہ علاقوں کے طلبا کو کمپوٹر کی تعلیم دینا صوبائی حکومت کی ترجیح ہے: سید نور علی شاہ

  

عمرکوٹ ( سید ریحان شبیر)مستقبل کے چیلنجوں سے نمٹنے کے لیے اور ملک کو ترقی یافتہ بنانے کے لیے کمپیوٹر کی تعلیم اس وقت اشد ضرورت ہے موجودہ سندھ حکومت کا یہ مشن ہے کہ پسماندہ علاقوں کوکمپیوٹر کی تعلیم اور علم کی روشنی سے روشن کیا جائے .

ان خیالات کا اظہار ضلع کاؤنسل چیرمین عمرکوٹ ڈاکٹر سید نور علی شاہ نے گورنمنٹ ایلیمنٹری کالج آف ایجوکیشن ( مین اینڈ وومین) عمرکوٹ میں آئی ٹی کمپیوٹر لیب کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے کہا کہ اس جدید دور میں کمپیوٹر کی اہمیت سے کوئی انکار نہیں کر سکتا اور آج کل تمام اساتذہ اور طالب علم کو کمپیوٹر کی تعلیم حاصل کرنا لازمی ہے اس لیے سرکاری تعلیمی اداروں میں کمپیوٹر لیب بنائی جا رہی ہیں تاکہ آئندہ آنے والی نسل مستقبل کے چیلنجوں سے بہتر طریقے سے مقابلہ کر سکے ، انہوں نے کہا کہ ضلع عمرکوٹ ایک پسماندہ ضلع ہے اور یہاں دوسرے اضلاع کے مقابلے میں کمپیوٹر کے بارے میں لوگوں کو معلومات بہت کم ہے موجودہ سندھ کے تمام اضلاع میں سرکاری سکولوں میں کمپیوٹر لیب کو لازمی قرار دیا ہے تاکہ ضلع میں ترقی کی راہ گامزن کرنے کے لیے ایک کمپیوٹر موثر ہتھیار ثابت ہو سکے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ گورنمنٹ ایلیمنٹری کالج کے طلب علم تعلیم مکمل کرنے کے بعد ملک میں اہم کردار ادا کریں گے ۔

اس موقع پر گورنمنٹ ایلمنٹری کالیج آف ایجوکیشن ( مین اینڈ وومین) عمرکوٹ کے پرنسپل ٹیکم داس ہرچندانی نے ضلع کاؤنسل چیرمین عمرکوٹ ڈاکٹر سید نور علی شاہ نے زاتی طور پر کو گورنمنٹ ایلیمنٹری کالج میں آئی ٹی کمپیوٹر لیب میں 16کمپیوٹراور فرنیچر دینے پر شکر ادا کیا اور کہا کہ کمپیوٹر کی تعلیم ایک ایسا ہتھیار ہے جس سے معاشرے میں تبدیلی ممکن ہے بعدازا ضلع چیرمین ڈاکٹر سید نور علی شاہ نے مختلف شعباجات میں آئی بی اے سکھر کی جانب سے جاری ٹرینگ کا دورہ کیا اور طلبہ و طالبات سے مختلف سولات بھی کئے ۔

اس موقع پرپی پی انفارمیشن سیکریٹری برہان الدین کنبھار ، چیف آفیسر ضلع کاؤنسل امتیاز علی ہالی پوٹو، آئی بی اے سکھر انچارج دانش میمن ، آغا افتخاز، عبدالواحید سموں ، میاں بخش کپری اور دیگر موجود تھے۔

مزید : علاقائی /سندھ /عمرکوٹ