سٹاک مارکیٹ میں تیزی کے بعد سٹیٹ بینک کے ذخائر کہاں جا پہنچے؟ اعلان کردیا گیا

سٹاک مارکیٹ میں تیزی کے بعد سٹیٹ بینک کے ذخائر کہاں جا پہنچے؟ اعلان کردیا گیا
سٹاک مارکیٹ میں تیزی کے بعد سٹیٹ بینک کے ذخائر کہاں جا پہنچے؟ اعلان کردیا گیا

  



کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک،نیوزایجنسیاں) کاروباری ہفتے کے چوتھے روز بھی سٹاک ایکسچینج میں تیزی رہی، حصص مارکیٹ کا 100 انڈیکس مزید 370 پوائنٹس بڑھ گیا۔تفصیلات کے مطابق رواں ہفتے سٹاک ایکسچینج میں رواں ہفتے جاری زبردست تیزی کے باعث بحال ہونیوالی حدوں میں 40300، 40400، 40500، 40600 کی حدیں شامل ہیں، پورے کاروباری روز کاروبار میں 0.91 فیصد بہتری دیکھی گئی۔

ایک موقع پر 100 انڈیکس 40809 پوائنٹس کی سطح کو چھو گیا تھا، تاہم تیزی کا یہ تسلسل برقرار نہ رہ سکا، کاروبار کے اختتام پر 100 انڈیکس 370 پوائنٹس کی تیزی کے بعد 40641 پوائنٹس کی سطح پر پہنچ کر بند ہوا۔کاروبار کے دوران 32 کروڑ 72 لاکھ 38 ہزار 870 شیئرز کا کاروبار ہوا جس کی مالیت 16 ارب 13 کروڑ 30 لاکھ 38 ہزار 593 روپے بنتی ہے۔دوسری طرف ملکی زرمبادلہ کے ذخائر 16ارب ڈالر تک پہنچ گئے ہیں، سٹیٹ بینک آف کے مطابق ملکی زرمبادلہ کے ذخائر 8ماہ کی بلند ترین سطح پر ہیں،41کروڑ ڈالر کا اضافہ بھی ریکارڈ کیا گیا ہے، زرمبادلہ کے ذخائر میں اضافہ پاکستان کی معاشی پالیسی اور اصلاحات پر اعتماد کا مظہر ہے۔

جمعرات کو سٹیٹ بینک کے مطابق ملکی زرمبادلہ کے ذخائر 8ماہ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گئے ہیں،رپورٹ کے مطابق ملکی زرمبادلہ کے ذخائر میں 41کروڑ ڈالر کا ریکارڈ اضافہ دیکھا گیا ہے، رپورٹ میں مزید کہا گیا کہ 41کروڑ ڈالر اضافے کے بعد ملکی زرمبادلہ کے ذخائر 16ارب ڈالر کے قریب آگئے ہیں، زرمبادلہ کے ذخائر میں بہتری سے پاکستانی معیشت مستحکم ہوگی جبکہ ملک بھر میں جاری ترقیاتی منصوبوں اور سرمایہ کاری میں لوگوں کی توجہ مزید بڑھے گی،سٹیٹ بینک کے مطابق ملک میں غیر ملکی سرمایہ کاری اضافے کے باعث زرمبادلہ میں مزید اضافے کی توقع ہے۔

مزید : بزنس


loading...