این ایل سی معاہدے سے  عمائدین کو مطمئن کرینگے‘ شاہ محمد 

      این ایل سی معاہدے سے  عمائدین کو مطمئن کرینگے‘ شاہ محمد 

  

خیبر (بیورو رپورٹ)لنڈی کوتل بازار میں خوگہ خیل قوم کے مشران اور عوام کا طورخم بارڈر ٹرمینل زمین کے حوالے سے ایف بی آر اور این ایل سی حکام کے ساتھ ایگریمنٹ کے حوالے سے جلسہ منعقد ہوا تفصیلات کے مطابق لنڈی کوتل بازار میں خوگہ خیل قوم کے مشران اور عوام کا طورخم بارڈر ٹرمینل زمین کے حوالے سے ایف بی آر این ایل سی حکام کے حوالے سے معاہدہ کے حوالے سے عوام کو اگاہی کے لئے جلسہ منعقد ہوا. جلسہ سے خوگہ خیل قوم کے سرکردہ مشر ملک ماثل شینواری. شاہ محمد شینواری. شاہ رخمان شینواری نثار شینواری. کمانڈر برکت اللہ شینواری نے خطاب کرتے ہوئے کہ این ایل سی اور ایف بی آر کے ساتھ جو آخری ایگریمنٹ ہوا ہیں اس پر ہم سب متفق ہیں اس میں کسی قسم قوم کے عوام کو نقصان نہیں ہیں جلسہ کے موقع پر مشران نے کہا کہ اگر خوگہ خیل قوم کے مشران اور عوام ایگریمنٹ پر تحفظات ہیں توہم 9رکنی کمیٹی اگر پریس کلب میں ہو بازار میں یا کسی دوسرے جگہ ہو تو ہم ان مشران کو ایگریمنٹ کے حوالے سے مطمئن کرنے کیلئے تیار ہیں. اس لئے خوگہ خیل کے مشران اور عوام غلط پروپیگنڈہ سے گریز کریں اور خوگہ خیل کے عوام کے لئے فائدہ کے لئے مشترکہ طور پر جدوجہد کریں تاکہ قوم خوگہ خیل کے عوام کو فائدہ پہنچ سکے اور مزید نقصانات سے بچ سکے جلسہ کے موقع پر خوگہ خیل قوم کے مشران ملک ماصل شاہ رحمان. برکت اللہ شینواری نے کہا کہ ایف بی آر اور این ایل سی حکام کے ساتھ جو ٹرمینل کا معاہدہ ہوا جوکہ 726کنال ہیں جس میں 200کنال شخصی زمین ہیں اور باقی 526کنال زمین خوگاخیل قوم کی مشترکہ ملکیت ہیں انہوں نے کہا کہ آخری جو ایگریمنٹ ہوا ہے ایف بی آر اور این ایل سی حکام کے ساتھ اس سے ہم مطمئن ہیں اور اگر کسی کو شک شبہ ہو یاایگریمنٹ پر تحفظات ہو توہم خوگہ خیل قوم کے ناراض مشران اور عوام کے ساتھ مطمئن کرنے کے ہرقسم کے مزاکرات کے لئے تیار ہیں تاکہ مزکورہ طورخم بارڈر ٹرمینل زمین کا مسئلہ خوش اسلوبی سے حل ہوسکے اور خوگاخیل قوم کے عوام کو فائدہ مل سکے اور مزید نقصان سے بچ سکے

مزید :

پشاورصفحہ آخر -