آسٹریا میں یکم فروری سے  ویکسینیشن لازمی، ڈیڑھ ملین آسٹریا کے لوگوں کو لگائی جائے گی

آسٹریا میں یکم فروری سے  ویکسینیشن لازمی، ڈیڑھ ملین آسٹریا کے لوگوں کو ...
آسٹریا میں یکم فروری سے  ویکسینیشن لازمی، ڈیڑھ ملین آسٹریا کے لوگوں کو لگائی جائے گی

  

ویانا۔(اکرم باجوہ)آسٹریا میں یکم فروری سے  ویکسینیشن لازمی، 1.5 ملین آسٹریا کے لوگوں کو لگائی جائے گی۔

 پہلا ٹیکہ لگانے کی تعداد ابھی بھی کم ہے اعلان شدہ لازمی ویکسینیشن کے باوجود جمعہ کو صرف 12935 لوگوں کو پہلا انجکشن لگایا گیا۔اگرچہ یہ پچھلے سات دنوں میں سب سے زیادہ تعداد ہے لیکن یہ وبائی مرض پر جلد قابو پانے کے لیے کافی نہیں ہے۔ گزشتہ ہفتہ سے کل 76125 افراد نے پہلی ویکسین لگوائی سات دن کی اوسط 10875 افراد ہے۔  مجموعی طور پر آسٹریا کی کل آبادی کا 71.5% کم از کم ایک بار ویکسین کرا چکے ہیں۔ ویکسینیشن سے انکار کرنے والوں کو 7600 یورو تک جرمانے کا سامنا کرنا پڑے گا۔

 5دسمبر سے 14 سال یا اس سے زیادہ عمر کے لگ بھگ 1.5 ملین آسٹرین باشندوں کو یکم فروری سے پہلے ویکسین کرانا ہوگی۔  گزشتہ روز ماہرین کے اجلاس کے بعد حکومت ایک دو روز میں ایک پہلا مسودہ قانون پیش کرنے کا ارادہ رکھتی ہے کہ اس ذمہ داری کو کیسے نافذ کیا جائے۔ ایک چیز واضح ہے تمام وہ افراد جنہوں نے ابھی تک ویکسین نہیں لگوائی انکو فروری سے پہلے سے ایک خط موصول ہوگا جس میں ویکسینیشن کرانے کی یاد دہانی کرائی جائے گی اگر یہ لوگ اس پر توجہ نہیں کرتے ہیں تو ان افراد کو € 7600 تک کے جرمانے کا خطرہ ہے - ممکنہ طور پر آپ کی تنخواہ کے مطابق بھی جرمانہ کیا جا سکتا ہے۔

مزید :

کورونا وائرس -