ماموں زاد بھائی نے 3 سالہ بچے کو زیادتی کا نشانہ بنا کر لاش جلا دی لیکن پکڑا کس طرح گیا ؟کامونکی میں انسانیت سوز واقعہ

ماموں زاد بھائی نے 3 سالہ بچے کو زیادتی کا نشانہ بنا کر لاش جلا دی لیکن پکڑا کس ...
ماموں زاد بھائی نے 3 سالہ بچے کو زیادتی کا نشانہ بنا کر لاش جلا دی لیکن پکڑا کس طرح گیا ؟کامونکی میں انسانیت سوز واقعہ

  

کامونکی (ڈیلی پاکستان آن لائن )تھانہ صدر کے علاقے ڈیرہ بابا جانی میں نہایت انسانیت سوزواقعہ پیش آیا ہے ،ماموں زاد بھائی نے 3 سالہ بچے کو زیادتی کانشانہ بنانے کے بعد قتل کر دیا اور اپنا جرم چھپانے کیلئے لاش پر پٹرول چھڑک کر آگ لگا دی ۔

تفصیلات کے مطابق کھیتوں میں بچے کی جلی ہوئی لاش دیکھ کر لوگوں نے ریسکیو کو بلایا جس کے بعد ریسکیو اہلکاروں نے پولیس کو اطلاع دی ، بچہ صبح8 بجے سے لاپتا تھا اور اسے ماموں زاد فیض نامی شخص لے کر گیا تھا ، والدین نے کھیتوں میں پہنچ کر بیٹے کی لاش کی شناخت کی ، والدین نے پولیس کو بتایا کہ صبح8بجے ماموں زاد فیض اسے اپنے ساتھ لے کر گیا تھا اور جب بعد میں اس سے پوچھا کہ محمد کہاں ہے تو وہ کہنے لگاکہ اسے گھر کے باہر چھوڑ گیا تھا ، پھر والدین بچے کو ڈھونڈتے رہے لیکن نہیں ملا بعدازاں کھیتوں سے بچے کی جلی ہوئی لاش برآمد ہوئی ۔

پولیس نے والدین کے بیان کو سامنے رکھتے ہوئے ماموں زاد فیض کو حراست میں لیا جس نے ابتدائی تحقیقات میں ہی جرم کا اعتراف کر لیا ، بچے کانام محمد ہے اور اس کی عمر3 سال تھی ، ملزم نے پولیس کے سامنے اعترا ف جرم کرتے ہوئے بتایا کہ اس نے بچے کے ساتھ زیادتی کر لی تھی جس پر اسے خدشہ تھا کہ اس کا راز کھل جائے گا تو اس نے راز کو چھپانے کیلئے پہلے اسے گلا دبا کر قتل پھر موٹر سائیکل سے پٹرول نکال کر بچے پر گرایا اور آگ لگا دی ۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -قصور -