2صوبے بد امنی کی لپیٹ میں، کیا ان حالات میں الیکشن کرائے جاسکتے ہیں؟ مولانا فضل الرحمن 

  2صوبے بد امنی کی لپیٹ میں، کیا ان حالات میں الیکشن کرائے جاسکتے ہیں؟ مولانا ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

                                                                                     اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) جے یو آئی (ف)کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ دو صوبے بدامنی کی لپیٹ میں ہیں، کیا ان واقعات میں الیکشن کرائے جاسکتے ہیں؟جے یو آئی کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ انتخابات میں ہر وقت جانے کو تیار ہیں، انتخابات میں برابر کا ماحول دیا جائے، ایک پارٹی میں چالیس لوگوں کو بلا کرالیکشن کروا دیا گیا، اس پارٹی میں ہوا بھری گئی تھی جو ختم ہوگئی۔مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ دو صوبے بدامنی کی لپیٹ میں ہیں، کیا ایسے ماحول میں انتخابی مہم چلائی جا سکے گی، پشاورمیں بھی واقعات ہوئے ہیں، ڈیرہ اسماعیل خان، ٹانک، لکی مروت میں بھی واقعات ہوئے، کیا ان سارے واقعات میں الیکشن کرائے جا سکتے ہیں، ٹھنڈ اس کے علاوہ ہوگی۔جے یو آئی کے سربراہ نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) کیساتھ انتخابی ایڈجسٹمنٹ کریں گے، مسلم لیگ (ن) سے انتخابی اتحاد ہوگیا ہے، جولوگ وفاداریاں تبدیل کررہے ہیں ان لوگوں کو زبردستی پی ٹی آئی میں لایا گیا تھا۔

مولانا فضل الرحمن

مزید :

صفحہ اول -