پاور چائنا کمپنی کیساتھ معاہدوں میں سیف الرحمان نے چینی کمپنی کی نمائندگی کی،خواجہ آصف

پاور چائنا کمپنی کیساتھ معاہدوں میں سیف الرحمان نے چینی کمپنی کی نمائندگی ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 اسلام آباد (آئی این پی)وفاقی وزیرپانی وبجلی خواجہ محمد آصف نے کہا ہے کہ حکومت پاکستان اور چین کی سرمایہ کار پاور چائنا کمپنی کے درمیان ہونے والے معاہدوں میں سیف الرحمان پاکستان کی نہیں چینی کمپنی کی نمائندگی کی ، حکومت کے اربوں ڈالر کے معاہدے پاور چائنا سے ہیں سیف الرحمان کی کمپنی رائل ہولڈنگ سے نہیں ، نیلم جہلم میں شارٹ ٹرم لائن چین کی کمپنی بنا رہی ہے۔ گزشتہ روز اپنے انٹرویو میں خواجہ آصف نے گیس، موٹروے اور پورٹ قاسم منصوبے میں سابق چیئرمین نیب سیف الرحمان کی شمولیت اور ان سے ہونے والے اربوں ڈالرز کے معاہدوں بارے خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ حکومت کا سیف الرحمان سے کوئی تعلق نہیں کیونکہ حکومت کی ڈیل چین کی کمپنی پاور چائنا سے ہے اور سیف الرحمان کی کمپنی رائل ہولڈنگ سے پاور چائنا کی ڈیل ہے ہماری نہیں۔ انہوں نے کہا کہ سیف الرحمان چیف کے ساتھ اربوں ڈالر کے معاہدوں میں شامل ہوئے اور انہوں نے اجلاس میں پاور چائنا کی نمائندگی کی تھی، پاکستان کی نہیں اور نیلم جہلم میں شارٹ ٹرم لائن بھی چین کی کمپنی ہی بنا رہی ہے۔انہوں نے میاں منشاء کے اس معاملے سے لا تعلقی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ میاں منشاء کا پاکستان میں سرمایہ کاری نہ کرنا اچھی بات نہیں ہے،ہو سکتا ہے کہ میاں منشاء کو مرضی کی ڈیل نہ مل رہی ہو کیونکہ ہر سرمایہ کار کو اجازت ہے کہ جو بھی بہتر ہو وہی ڈیل کرے۔ خواجہ آصف

مزید :

صفحہ آخر -