سعودی عالم نے نوجوان جوڑوں کو خوشخبری سنا دی لیکن ساتھ لڑکیوں کو یہ بھی کہہ دیا کہ۔۔۔

سعودی عالم نے نوجوان جوڑوں کو خوشخبری سنا دی لیکن ساتھ لڑکیوں کو یہ بھی کہہ ...
سعودی عالم نے نوجوان جوڑوں کو خوشخبری سنا دی لیکن ساتھ لڑکیوں کو یہ بھی کہہ دیا کہ۔۔۔

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک) ہمارے ہاں بچوں کی مرضی معلوم کئے بغیر ان کے رشتے طے کرنے کا رواج بہت عام ہے جس کا ایک لازمی نتیجہ یہ ہوتا ہے کہ اس قسم کی شادیاں شدید تلخی اور مسائل کا شکار ہوجاتی ہیں اور اس کا حل یہی ہے کہ رشتوں کے معاملات طے کرتے وقت مذہب کے احکامات کو مدنظر رکھا جائے۔ سعودی عرب کے ممتاز مفتی شیخ عبدالرحمن البراق نے فتویٰ جاری کرتے ہوئے فرمایا ہے کہ منگنی سے پہلے لڑکے کو اجازت ہے کہ وہ لڑکی کو دیکھ سکے لیکن اس کے لئے شرط یہ ہے کہ لڑکی میک اپ اور بناﺅ سنگھار نہ کرے اور اس کے والدین اس ملاقات کا اہتمام اس طرح سے کریں کہ لڑکی کو یہ خبر نہ ہو کہ کوئی اسے دیکھنے کی نیت سے آیا ہے۔

مزید پڑھیں :مائیکرو سافٹ ورڈ میں Autocorrectکا استعمال انتہائی خطرناک غلطیوں کو جنم دے سکتا ہے
 فتوے میں کہا گیا ہے کہ لڑکی کو مطلع نہ کرنا اس لئے ضروری ہے کہ اسے یہ محسوس نہ ہو کہ گویا وہ کوئی چیز ہے کہ جسے فروخت کے لئے پیش کیا جارہا ہے اور مزید یہ کہ اگر لڑکا بات آگے نہ بڑھانا چاہے تو یہ امر لڑکی کے لئے مایوسی اور دکھ کا باعث نہ بنے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -