پنجاب سیف سٹیز اتھارٹی کی تین بڑے شہروں میں کمانڈ اینڈ کنٹرو ل سینٹر بنانے کی تیاریاں مکمل

پنجاب سیف سٹیز اتھارٹی کی تین بڑے شہروں میں کمانڈ اینڈ کنٹرو ل سینٹر بنانے کی ...
پنجاب سیف سٹیز اتھارٹی کی تین بڑے شہروں میں کمانڈ اینڈ کنٹرو ل سینٹر بنانے کی تیاریاں مکمل

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)سیف سٹیز اتھارٹی پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ کے ذریعے پنجاب کے تین بڑے شہروں راولپنڈی، ملتان اور فیصل آباد میں کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر تعمیر کرے گی،پری بڈنگ میں13پاکستانی اور 10غیر ملکی کمپنیوں کا سیف سٹی پراجیکٹس میں گہری دلچسپی کا اظہار۔

تفصیلات کے مطابق  سیف سٹی ہیڈکوارٹر میں پری بڈنگ پبلک پرائیویٹ پاٹنرشپ کا نفرنس کا انعقاد کیا گیا جس میں چیف آپریٹنگ آفیسر اکبر ناصر خان،ممبرپی اینڈڈی آغا وقار،چیف ایڈمن آفیسر محمد کامران خان اور چیف فنانس آفیسر نثار چیمہ اورپی پی پی سیل سمیت 23نامورقومی و بین الاقوامی کمپنیوں نے شرکت کی۔ پری بڈنگ کانفرنس میں شامل 23کمپنیوں میں10 انٹر نیشنل اور 13پاکستانی کمپنیاں شامل تھیں۔ نوکیا،ہواوے،میٹ رولا،ہائی سیل پاور،صارف،این آر ٹی سی،میگا پلس،زیڈٹی ای اورپی ٹی سی ایل سمیت دیگر کمپنیوں نے منصوبے میں گہری دلچسپی کا اظہار کیا۔پنجاب سیف سٹیز اتھارٹی پبلک پرائیویٹ پارٹنر شپ کے ذریعے مزیدتین شہروں میں سیف سٹی پراجیکٹ لگائے گی یہ تین پراجیکٹ راولپنڈی،ملتان اور فیصل آباد میں لگائے جائینگے۔ اس موقع پر چیف آپریٹنگ آفیسر اکبر ناصر خان نے شرکاء کو تینوں پراجیکٹس پر بریفنگ دی اور بتایا کہ وزیرپلاننگ اس کام کی خود نگرانی کررہے ہیں۔اس موقع پر ممبر پی اینڈ ڈی آغاوقار نے پرائیویٹ سٹیک ہولڈرز کو اعتماد میں لیااور ان کا کہنا تھا حکومت کی ترجیح ہے کہ صوبے میں ترقی کے عمل میں پرائیویٹ سیکٹر کو بھرپور حصہ دیا جائے۔13پاکستانی اور 10غیر ملکی کمپنیوں نے سیف سٹی پراجیکٹس میں گہری دلچسپی کا اظہار کیا اور سیف سٹیز اتھارٹی کی کارکردگی کو سراہا۔یاد رہے کہ حکومت پنجاب کی ہدایت پر اتھارٹی پنجاب کے تمام ڈویژنز میں مرحلہ وار کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر بنانے کا ارادہ رکھتی ہے۔ اس کے علاوہ لاہور ڈویژن کے تینوں اضلاع قصور، شیخوپورہ اور ننکانہ صاحب میں بھی سیف سٹی کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹرز زیر تعمیر ہیں۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور